بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / لاہور ہائی کورٹ کا حافظ سعید کو رہا کرنے کا حکم

لاہور ہائی کورٹ کا حافظ سعید کو رہا کرنے کا حکم


لاہور۔لاہور ہائی کورٹ نے جماعت الدعو کے امیر حافظ سعید کی نظر بندی میں توسیع سے متعلق حکومتی درخواست مسترد کرتے ہوئے انکی رہا ئی کا حکم جاری کر دیا ہے بر طانوی خبر رساں ادارے سے گفتگو کر تے ہو ئے وکیل استغاثہ ستار ساحل نے بتایا کہ حکومتِ پنجاب کی جانب سے حافظ سعید کی نظر بندی میں 60 دن کی توسیع سے متعلق درخواست لاہور ہائی کورٹ نے خارج کرتے ہوئے انہیں رہا کرنے کا حکم دیا ہے۔

وکیل استغاثہ نے بتایا کہ حافظ سعید کی 30 دن کی نظری بندی کی مدت ختم ہوچکی ہے اور اس میں توسیع کے حوالے سے حکومتی درخواست مسترد ہونے پر عدالتی احکامات کے تحت حافظ سعید آج بروز جمعرات رہا ہوجائیں گے اس سے قبل گزشتہ روز لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس عبدالسمیع خان کی سربراہی میں تین رکنی ریویو بورڈ نے بند کمرے میں سماعت کی، اس موقع پر حافظ سعید بھی پیش ہوئے اور اپنی نظر بندی کو بلا جواز قرار دیتے ہوئے موقف اختیار کیا کہ بغیر کسی ٹھوس ثبوت کے انہیں ایک سال سے نظر بند رکھا گیا ہے۔

جس پر تین رکنی ریویو بورڈ نے تمام ریکارڈ کا جائزہ لینے کے بعد حافظ سعید کی نظر بندی کی معیاد مکمل ہونے سے ایک دن پہلے ہی نظر بندی ختم کر دی۔ ریویو بورڈ نے حکم دیا کہ حافظ سعید کے خلاف کوئی دوسرا کیس نہ ہونے کی بنیاد پر انہیں فوری طور پر رہا کر دیا جائیواضح رہے کہ جماعت الدعو کے سربراہ حافظ سعید کو رواں سال جنوری میں حکومت پنجاب نے ان کے گھر پر نظر بند کردیا تھا جس کے خلاف حافظ سعید نے اپنے وکیل اے کے ڈوگر کے توسط سے ہائی کورٹ میں درخواست دائر کی تھی