بریکنگ نیوز
Home / انٹرنیشنل / مصر: مسجد میں دھماکے اور فائرنگ سے 200 سے زائد نمازی شہید

مصر: مسجد میں دھماکے اور فائرنگ سے 200 سے زائد نمازی شہید


مصر کے شمالی صوبے میں مسجد ہونے ہونے والے دھماکے اور فائرنگ کے نتیجے میں 200 سے زائد نمازی شہید اور 100 سے زائد زخمی ہو گئے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق مصر کے صوبے سینا کے دارالخلافہ العریش کے علاقے بیر العبد کی الروضہ مسجد میں نماز جمعہ کے دوران ہونے والے بم دھماکے اور فائرنگ میں 120 افراد زخمی بھی ہوئے۔

حکام کا کہنا ہے کہ پہلے نماز جمعہ کے دوران دھماکا ہوا اور پھر حملہ آوروں نے فائرنگ کی تاہم کسی بھی گروپ کی جانب سے تاحال حملے کی ذمہ داری قبول نہیں کی گئی ہے۔

مصر کے سرکاری میڈیا نے دھماکے میں 200 نمازیوں کے شہید ہونے کی تصدیق کر دی ہے۔ دوسری جانب مصری کے صدر عبدالفتح السیسی نے متاثرہ علاقے میں ایمرجنسی نافذ کر کے تین روزہ سوگ کا اعلان کیا ہے۔

مسجد پر ہونے والے دھماکے کے زخمیوں کو طبی امداد کے لیے مختلف اسپتالوں میں منتقل کر دیا گیا ہے جہاں متعدد افراد کی حالت تشویشناک ہونے کے باعث ہلاکتوں میں اضافے کا خدشہ ہے۔

خیال رہے کہ رواں برس ستمبر میں بھی العریش کے قریب شدت پسندوں نے ایک سیکیورٹی کانوائے پر حملہ کر کے 18 اہلکاروں کو ہلاک کر دیا تھا۔