بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / دھرنے والوں کے ساتھ ہر وقت مذاکرات کے لیے تیار ہیں، احسن اقبال

دھرنے والوں کے ساتھ ہر وقت مذاکرات کے لیے تیار ہیں، احسن اقبال


اسلام آباد: وفاقی وزیر داخلہ احسن اقبال نے کہا ہے کہ اسلام آباد میں آپریشن عدالتی احکامات پر شروع کیا گیا۔

احسن اقبال نے سرکاری ٹی وی پر رد عمل دیتے ہوئے کہا کہ عدالتی احکامات کی روشنی میں آپریشن شروع کیا کیونکہ  عدالتی احکامات کی بجا آوری سےانکار نہیں کرسکتے، انتظامیہ کا فرض ہے کہ عدالتی احکامات پر مکمل عملدرآمد کرے لہٰذا انتظامیہ نے ہر ممکن کوشش کہ جان و مال کا نقصان نہ ہو۔

وزیر داخلہ کا کہنا تھا کہ دھرنے والے اتنے سادہ نہیں، ان کے پاس کچھ ایسی چیزیں اور وسائل ہیں جو ریاست کےخلاف استعمال ہوتے ہیں اور اس کو دیکھتے ہوئے اپنی حکمت عملی بنانا ہے۔احسن اقبال نے بتایا کہ دھرنے والوں ک پاس آنسو گیس کے شیل ہیں جو انہوں نے فورسز پر پھینکے۔

انہوں نے مزید کہا کہ یہ ختم نبوت سے دوستی نہیں بلکہ دشمنی ہے جس سے قوم کی صفوں میں انتشار پیدا ہو رہا ہے، یہ لوگ بین الاقوامی سازش میں استعمال ہورہے ہیں، اس وقت پاکستان کے دشمن حلقے خوش ہورہے ہیں۔

احسن اقبال نے کہا کہ حکومت نے پر امن طریقے سے دھرنے کا حل نکالنے کی کوشش کی ہے اور اب بھی دھرنے والوں کے ساتھ ہر وقت مذاکرات کے لیے تیار ہیں لیکن ملک میں انتشار پھیلانے میں ایک جماعت ملوث ہورہی ہے۔انہوں نے عوام سے اپیل کی کہ کسی قسم کی بدامنی کی سازش سے دور رہیں کیوں کہ ملک میں انتشار و عدم استحکام کا متحمل نہیں ہوسکتا۔

وزیر داخلہ نے کہا کہ ختم نبوت کا قانون پہلے سےزیادہ مضبوط ہوگیا ہے اور ایسے میں لوگوں کو عقائد کی بنیاد پر تشدد پر اکسانا درست نہیں۔واضح رہے کہ اسلام آباد میں فیض آباد کے مقام پر 20 روز سے جاری دھرنے کو ختم کرانے کے لیے پولیس اور ایف سی نے آپریشن کیا جس کے نتیجےمیں اب تک سیکورٹی اہلکاروں سمیت 190 سے زائد افراد زخمی ہوچکے ہیں۔