بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / ڈیرہ میں تباہی کا منصوبہ بنانیوالے تخریب کاررنگے ہاتھوں گرفتار

ڈیرہ میں تباہی کا منصوبہ بنانیوالے تخریب کاررنگے ہاتھوں گرفتار


پشاور۔محکمہ انسداد دہشت گردی خیبرپختونخوا نے تباہی کا منصوبہ ناکام بناتے ہوئے 5 عسکریت پسندوں کو تخریب کاری کی منصوبہ بندی کرتے ہوئے رنگے گرفتار کرلیا ہے جنہیں مزید تفتیش کیلئے نامعلوم مقام پر منتقل کردیا گیا ہے محکمہ انسداد دہشت گردی (سی ٹی ڈی) پشاور ہیڈ کوارٹر سے جاری بیان کے مطابق ڈیرہ اسماعیل خان ریجن سی ٹی ڈی نے خفیہ اطلاع پر کاروائی کرتے ہوئے دیہہ نواب محلہ صدیق اکبر میں محمد یوسف نامی شخص کے بیٹھک پر چھاپہ مارا جہاں سے 5 دہشت گردوں محمد وقاص ولد محمد زبیر، محمد صدیق ولد غلام قاسم،، محمد عامر ولد اللہ بخش، محمد یوسف ولد غلام صدیق اور عمر فاروق ولد ثناء اللہ کو گرفتار کرلیا۔

بیان کے مطابق ملزمان کو اس وقت گرفتار کیا گیا جب وہ بیٹھک میں کسی خاص مقام کو نشانہ بنانے کے حوالے سے منصوبہ بندی کررہے تھے جن کے قبضے سے 10 کلو گرام بارودی مواد جسے پلاسٹک کی بالٹی میں رکھا گیا تھا، ایک کلو گرام نٹ اور بال بیئرنگ، بیٹری، 3 فٹ سیفٹی فیوز، 5 فٹ پرائمہ کارڈ، ایک ڈیٹونیٹر اور 2 پستولیں برآمد کرلی۔

جاری بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ گرفتار دہشت گرد 24 اپریل 2017 کو تھانہ یونیورسٹی پولیس پر حملے میں بھی مطلوب تھے جس کے نتیجہ میں 2 پولیس اہلکار زخمی جبکہ پولیس کی جوابی کارروائی میں ان کے 2 ساتھی دہشت گرد مطیع اللہ اور کاشف جمال مارے گئے تھے تاہم ملزمان کو گرفتاری کے بعد مزید تفتیش کیلئے نامعلوم مقام پر منتقل کردیا گیا ہے جن سے اہم انکشافات متوقع ہے۔