بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / گھر بیٹھے اپنی اراضی کا ریکارڈ حاصل کرنا ممکن

گھر بیٹھے اپنی اراضی کا ریکارڈ حاصل کرنا ممکن


پشاور۔ خیبر پختونخوا میں فرسودہ پٹوار خانہ نظام کی تبدیلی کی جانب ایک اور پیش رفت،، مردان میں گھر بیٹھے فرد وصولی سسٹم کا اجراء،سائلین اب گھر بیٹھے اپنی اراضی کا ریکارڈ حاصل کرسکیں گے۔مردان کی ضلعی انتظامیہ نے عوام کی سہولت کے لیے ای فردات اور ڈیلیوری سروس برائے فردات طریقہ کار کا آغاز کردیا ہے ۔ خیبر پختونخوا حکومت کی جانب سے پٹوار خانہ نظام میں اصلاح اور عوامی فلاح کے تناظر میں تمام لینڈ ریکارڈ کی کمپیوٹرائزیشن کا جو سلسلہ شروع کیا ہے ۔

مردان ضلعی انتظامیہ کا اقدام اسی سلسلے کی کڑی ہے۔ زمین و اراضی کے ریکاڑد کے حصول میں عوام کو اکثر و بیشتر وقت کے ضیاع کی شکایات درپیش رہتی ہیں،اس نئے وضع کردہ طریقہ کار کی بدولت اسکا ازالہ ہوگا۔ڈیلیوری سروس برائے فردات کے ذریعے اپنی اراضی کا فرد منگوانے کے لیے سائل کسی بھی قریبی ڈاکخانے میں جاکر وہاں دستیاب فارم کو پر کرکے اور مبلغ چارسو روپے فیس کے ساتھ جمع کرنے ہونگے جس کے بعد سائل کو دس دن کے اندر گھر بیٹھے متعلقہ ریکارڈوصول ہوجائیگا۔

ای فردنظام کے لیے بھی سائل کوپٹوارخانے کے چکرلگانے کی بجائے ضلع مردان کی سرکاری ویب سائٹ (www.mardan.kp.gov.pk)کے ذریعے متعلقہ سہولت ملے گی۔ویب سائٹ پر سروسز کے آپشن میں ای فرد کا فارم دستیاب ہوگا جسے پر کرکے بھیجنے پر سائل کوای فرد بذریعہ ای میل ارسال کردی جائیگی۔اس نئے طریقہ کار کی بدولت عوام کو سہولت و آسانی ہوگی اور انکے وقت کی بچت ہوگی جبکہ پٹوار خانوں میں بھی سائلین کے ہروقت لگی بھیڑ کو کم کرنے میں مددملے گی ۔

خیبر پختونخوا حکومت نے پٹوار خانوں کا نظام جدید خطوط پر استوار کرنے کا اہم نوعیت کا قدم صوبے کے عوام کے وسیع تر مفاد کے لیے شروع کیا ہے تاکہ لینڈ ریکارڈ سالہا سال گزرنے کے بعد بھی موجود رہے اور بوقت ضرورت آسانی سے دستیاب ہوسکے جبکہ اس نظام کی بدولت شفافیت کو بھی برقرار رکھا جائیگا۔ ضلع مردان میں ای فردات اور ہوم ڈیلیوری فردات کا نظام نہ صرف خیبر پختونخوا بلکہ پاکستان بھر میں اپنی نوعیت کا پہلا قدم ہے۔