بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / ہماری حکومت دوسروں سے مختلف ہو گی ٗ عمران خان

ہماری حکومت دوسروں سے مختلف ہو گی ٗ عمران خان


لیہ۔ پاکستان تحریک انصاف کے چیرمین عمران خان نے کہا ہے کہ آصف زرداری اور نواز شریف کی پارٹنر شپ نے ملک کو مقروض کردیا ہے اور اگر یہ سب ایسے ہی چلتا رہا تو پاکستان کا مستقبل برا ہوگا اگر ایسی ہی چلتے رہے تو پاکستان کا مستقبل برا ہوگا،ہماری حکومت دوسروں سے مختلف ہو گی لیہ میں جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے پاکستان تحریک انصاف کے چیرمین عمران خان کا کہنا تھا کہ قوموں کی زندگی میں اونچ نیچ ہوتی رہتی ہے نہ کوئی ہمیشہ اوپر رہتا ہے اور نہ کوئی ہمیشہ نیچے، جو قومیں ظلم کے نظام کے سامنے جہاد نہیں کرتی وہ برباد ہوجاتی ہیں۔

ایک وقت تھا جب پاکستان سب سے آگے جارہا تھا لیکن اب سب سے پیچھے کیوں ہے، آصف زرداری اور نواز شریف کی پارٹنر شپ نے ملک کو مقروض کردیا، ان کے آنے سے پہلے ہر پاکستانی 35 ہزار کا مقروض تھا اور آج ایک لاکھ 20 ہزار کا مقروض ہے، انہوں نے ایک چھوٹے سے طبقے کو نوازا اور عوام کو مقروض کردیا، اگر ایسی ہی چلتے رہے تو پاکستان کا مستقبل برا ہوگا۔عمران خان کا کہنا تھا کہ ہماری حکومت دوسروں سے مختلف ہو گی، ہماری ساری پالیسی غریبوں کے لیے بنیں گی، ہر پاکستانی سبز پاسپورٹ دنیا میں فخر سے لے کرجائے گا، ملک میں سوئٹزرلینڈ سے زیادہ سیاح آئیں گے اور یہاں بیرون ملک سے لوگ نوکریوں کے لیے آئیں گے۔

ان کا کہنا تھا کہ ہم نے خیبر پختونخوا کے سرکاری اسپتالوں کا معیار بلند کیا ہے، ہم نے سرکاری اسپتالوں میں ڈاکٹروں کی تعداد 3 ہزار سے بڑھا کر9 ہزار کر دی ہے اب عوام کو ہر سرکاری اسپتال میں ڈاکٹر ملیں گے، ہم نے 3 برسوں میں ایک ارب 3 کروڑ درخت لگائے اور صوبے میں چھانگا مانگا جتنے 40 جنگل اگائے ہیں، پختونخوا میں پہلی بار ڈیڑھ لاکھ بچے پرائیویٹ سے سرکاری اسکولوں میں آئے ہیں۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ جب بھی الیکشن آئے گا، یہ سارے چور اکھٹے بھی ہوجائیں تو تحریک انصاف انہیں شکست دے گی جب کہ نواز شریف کو جواب دینا ہوگا اور اگر جواب نہیں دیا تو ان کا ٹھکانہ اڈیالہ جیل ہوگا، نواز شریف اپنا موازنہ میرے ساتھ نہ کریں بلکہ سلطانہ ڈاکو سے کریں، میں وہ پاکستانی ہوں جو اپنا پیسا باہر سے ملک میں لے کر آیا، نواز شریف کا نظریہ الیکشن میں دھاندلی ہے، سب کو پیسا کھلا، دھاندلی سے الیکشن جیتو اور پھر اقتدار میں پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین نے کہا کہ پاکستانی قوم سب سے زیادہ خیرات اور سب سے کم ٹیکس دیتی ہے۔

ملک سے ایک سال میں ایک ہزار ارب روپیہ چوری ہوکر باہر جارہا ہے، جب پیسے والے ٹیکس نہیں دیتے توعوام پر ٹیکس لگتا ہے، ہماری حکومت آئی تو عوام کے ٹیکس کا پیسہ چوری نہیں ہونے دیں گے، کرپشن مافیا کو شکست دیں گے تو ملک میں سرمایہ کاری آئے گی۔ غریب قوم کا پیسہ کیسے شہنشاہوں پر خرچ ہوسکتا ہے، اس لیے سب سے پہلے لاہور گورنر ہاؤس کو گرائیں گے۔عمران خان کا کہنا تھا کہ احسن اقبال معتبر شکل بناکر معتبر جھوٹ بولتے ہیں، محمودخان اچکزئی نے اپنے ضمیر کی چھوٹی قیمت لگائی، سارے خاندان کو اٹھا کر اسمبلی میں لے گئے جب کہ مولانافضل الرحمان بھی اپنی کرپشن بچانے کے لیے نواز شریف کے ساتھ ہیں آج ہر پاکستانی 1 لاکھ 20 ہزار کا مقروض ہو چکا ہے۔

ملائشیا کے لوگ پاکستان سے سیکھ کر آگے نکل گئے، ہم پاکستان کو دوبارہ عظیم ملک بنائیں گے اور دنیا میں سبز پاسپورٹ کی عزت کرائیں گے۔ عمران خان نے کہا کہ آج ریاست کی جانب سے اعلی تعلیم کا حقدار صرف ایک چھوٹا سا طبقہ ہے کیونکہ یہاں سڑکوں اور انڈر پاسز اور فلائی اوورز پر زیادہ پیسے خرچ کئے جاتے ہیں اور تعلیم پر کم۔ انہوں نے کہا کہ ہماری حکومت آئی تو ہم پہلے عوام پر پھر میٹرو اور سڑکوں پر خرچ کریں گے۔

خیبر پختونخوا میں ڈیڑھ لاکھ بچے پرائیویٹ سکولوں سے سرکاری سکولوں میں آئے۔عمران خان نے یہ بھی کہا کہ خیبر پختونخوا میں 2013 میں 3 ہزار آج 9 ہزار ڈاکٹر ہیں، وہاں غریبوں کو ہیلتھ کارڈ جاری کئے گئے ہیں، سرکاری ہسپتالوں کا معیار بہتر کیا گیا ہے اور آنے والی نسلوں کیلئے درخت لگائے گئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ تحریک انصاف کی حکومت کسانوں کیساتھ کھڑی ہو گی، امریکہ اور یورپ کی طرح کسانوں کی مدد کریں گے۔

آج یہاں دو نمبر کیڑے مار کھادیں کسانوں کو دی جاتی ہیں۔چیئرمین پی ٹی آئی نے مزید کہا کہ دعوی کرتا ہوں پاکستان سے 8 ہزار ارب اکٹھا کر کے دکھاں گا، مجھے قوم سب سے زیادہ فنڈز دیتی ہے، دنیا میں پاکستانیوں جتنے کھلے دل والے لوگ کہیں نہیں ہیں، ہم عوام کا پیسہ عوام پر خرچ کریں گے۔ عمران خان نے دعوی کیا کہ نواز شریف اور میرا کوئی موازنہ نہیں، نواز شریف اپنا موازنہ سلطانہ ڈاکو سے کرو، نواز شریف کا نظریہ الیکشن میں دھاندلی کرنا ہے۔

عمران خان نے مزید کہا کہ محمود خان اچکزئی کے ضمیر کی بڑی چھوٹی قیمت لگی، اچکزئی نے اپنی حرکتوں سے پشتونوں کو شرمندہ کیا۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ آج ہمیں ڈیزل پر پچاس فیصد ٹیکس دینا پڑتا ہے، کرپشن مافیا کو شکست ہو گی تو پاکستان میں سرمایہ کاری آئے گی، جس طرح خیبر پختونخوا پولیس ٹھیک کی اسی طرح تمام ادارے ٹھیک کرکے دکھائیں گے۔