بریکنگ نیوز
Home / انٹرنیشنل / تائیوان چینی سر زمین کا ایک اٹوٹ انگ ہے، چینی وزیر خارجہ

تائیوان چینی سر زمین کا ایک اٹوٹ انگ ہے، چینی وزیر خارجہ


بیجنگ ۔ چین نے کہا ہے کہ دنیا میں صرف ایک چین ہے، تائیوان چینی سر زمین کا ایک اٹوٹ حصہ ہے۔ عوامی جمہوریہ چین کی حکومت چین کی نمائندگی کرنے والی واحد قانونی حکومت ہے اوریہ عالمی برادری کی جانب سے قبول کردہ حقیقت، عالمی براداری میں ایک چین کی صورتحال کو تبدیل نہیں کیا جا سکتا ۔چائنہ ریڈیو انٹر نیشنل کے مطابق چینی وزارت خارجہ کے ترجمان گن شوان نے امریکہ کے نو منتخب صدر ٹرمپ اور تائیوان انتظامیہ کی سربراہ چھائی انگون کے درمیان ٹیلیفونک گفتگو کے بارے میں ایک صحافی کے سوال کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ دنیا میں صرف ایک چین ہے، تائیوان چینی سر زمین کا ایک اٹوٹ حصہ ہے۔

عوامی جمہوریہ چین کی حکومت چین کی نمائندگی کرنے والی واحد قانونی حکومت ہے اوریہ عالمی برادری کی جانب سے قبول کردہ حقیقت ہے۔ انھوں نے کہاکہ ایک چین کا اصول چین امریکہ تعلقات کی سی اسی بنیاد ہے۔ انھوں نے امریکہ سے ایک چین کی پالیسی اور چین امریکہ تین مشترکہ اعلامیئے میں طے شدہ وعدوں پر عمل درآمدکا مطالبہ کیا ۔اس حوالے سے چین کی ریاستی کونسل کے تحت تائیوان دفتر کے امور کے ترجمان آنفونگ شان نیبھی کہا کہ تائیوان انتطامیہ کی اس حرکت سے اس حقیقت میں کوئی تبدیلی نہیںآئے گی کہ تائیوان چین کا ایک حصہ ہے۔ انھوں نے کہا کہ ہم ہمیشہ ایک چین کی پالیسی اپناتے ہوئے تائیوان کی علیحدگی کی مخالفت کرتے رہیں گے۔

انھوں نے مزید کہا کہ ہم تائیوان کی علیحدگی کی کسی بھی قسم کی کارروائیوں کی روک تھام اور ملک کی وحدت کے عزم کے ساتھ ہی دفاع کی صلاحیت بھی رکھتے ہیں۔ امریکہ کے نو منتخب صدر ٹرمپ اور تائیوان انتظامیہ کی سربراہ چھائی انگون کے درمیان ٹیلیفونک گفتگو کے بارے میں چینی وزیرخارجہ وانگ ای نے کہا کہ یہ تائیوان انتظامیہ کی ایک سازش ہے۔ اس سے عالمی براداری میں ایک چین کی صورتحال کو تبدیل نہیں کیا جا سکے گا۔ ان کا خیال ہے کہ امریکہ ایک چین کی پالیسی کو تبدیل نہیں کرے گا۔ ایک چین کی پالیسی کی بنیاد پر چین امریکہ کے تعلقات صحت مندانہ طور پر ترقی کرتے رہے ہیں۔ ان کو امید ہے کہ اس سی اسی بنیاد پر کوئی نقصان نہیں پہنچے گا۔