بریکنگ نیوز
Home / انٹرنیشنل / پاکستان خطے میں امن کے لیے قدم بڑھانے کے لئے تیار ہے، طارق فاطمی

پاکستان خطے میں امن کے لیے قدم بڑھانے کے لئے تیار ہے، طارق فاطمی

واشنگٹن ۔وزیر اعظم کے معاون خصوصی طارق فاطمی نے کہا ہے کہ امن کے لیے پاکستان قدم بڑھانے کے لئے تیار ہے، پاک بھارت تعلقات میں پاکستان نے ہمیشہ مذاکرات کا دروازہ کھلا رکھا ہے، شہریوں پر حملہ توجنگ میں بھی نہیں کیا جاتا،بھارت کشمیر میں انسانی حقوق کی بھی خلاف ورزی کررہا ہے، پاکستان اور امریکا کے تعلقات سات دہائیوں پر مشتمل ہیں، ٹرمپ کے صدارتی ذمہ داریاں سنبھالنے کے بعد دوطرفہ بامعنی تعلقات کافروغ چاہتے ہیں،پاکستان افغانستان سمیت خطے میں قیام امن کیلئے کردار ادا کررہا ہے۔امریکا میں میڈیا کے نمائندوں سے ملاقات میں وزیراعظم کے معاون خصوصی طارق فاطمی نے کہاکہ ہارٹ آف ایشیا کانفرنس میں شرکت امن کی خاطر کی۔

کانفرنس میں شرکت کر کے بھارت کو مذاکرات کی باضابطہ دعوت دی۔ ٹرمپ انتظامیہ کو خطے کے چیلنجز کے بارے میں آگاہ کردیاہے اور خطے میں امن کے لئے پاکستان قدم بڑھانے کے لئے تیار ہے اور ان کا مزید کہنا تھا کہ بھارت کی جانب سے ایل او سی کی مسلسل خلاف ورزی کی جارہی ہے اور معصوم شہریوں کو نشانہ بنایاجارہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ شہریوں پر حملہ توجنگ میں بھی نہیں کیا جاتا۔ بھارت کشمیر میں انسانی حقوق کی بھی خلاف ورزی کررہا ہے۔ ملک سے دہشتگردی کے خاتمے کے لئے پاکستان پر عزم ہے اور دہشتگردی کے خلاف جنگ کامیابی سے جاری ہے۔وزیراعظم کے معاون خصوصی طارق فاطمی نے کہا ہے کہ پاکستان اور امریکا کے تعلقات سات دہائیوں پر مشتمل ہیں۔ ٹرمپ کے صدارتی ذمہ داریاں سنبھالنے کے بعد دوطرفہ بامعنی تعلقات کافروغ چاہتے ہیں۔ طارق فاطمی کا کہنا تھا کہ امریکاآمدکا مقصد نئی انتظامیہ کے ساتھ رابطے استوارکرنا ہے۔ پاکستان نئی امریکی انتظامیہ کے ساتھ تعلقات کا فروغ چاہتا ہے،انہوں نے کہا کہ پاکستان علاقائی اوربین الاقوامی سطح پر اپنا کردار ادا کرنا چاہتاہے،اور پاکستان افغانستان سمیت خطے میں قیام امن کیلئے کردار ادا کررہا ہے۔

انہوں نے کہا کہ دہشت گردی کے خلاف جنگ میں پاکستانی فوج کے5 ہزار جوان شہید ہوچکے ہیں۔پاکستان کے قبائلی اورسرحدی علاقوں میں 2لاکھ فوجی آپریشن میں مصروف ہیں۔ انہوں نے کہا کہ دہشت گردی کے خلاف جنگ میں پاکستان نے بھاری قیمت ادا کی ہے اور اس آپریشن کی بدولت پاکستان میں دہشت گردی میں کمی واقع ہوئی ۔ پاکستان نیشنل ایکشن پلان پرعمل پیراہے اور پوری پاکستانی قوم دہشت گردی سے نجات کے لیے متحد ہے۔ مسئلہ کمشیر پر بات کرتے ہوئے طارق فاطمی کا کہنا تھا کہ مسئلہ کشمیر کے حل کیلئے پاکستان اور بھارت کو مذاکرات کرناہوں گے۔مقبوضہ کشمیر میں اس وقت آزادی کی تحریک زور پکڑرہی ہے جبکہ بھارت کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیاں کررہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ کشمیرمیں بھارتی مظالم کے باعث600 سے اائد افرادبینائی کھوچکے ہیں۔بھارت لائن آف کنٹرول پربیگناہ شہریوں کونشانہ بنارہا ہے۔