بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / ہم فرنگی قانون ایف سی آر کو نہیں مانتے،مولانا فضل الرحمان

ہم فرنگی قانون ایف سی آر کو نہیں مانتے،مولانا فضل الرحمان

پشاور۔ جے یو آئی (ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے کہا ہے کہ ہم فرنگی قانون ایف سی آر کو نہیں مانتے،قبائل کے سیاسی مستقبل کا فیصلہ قبائلی جرگہ کرے گا،قبائلی جرگے کی بات سنے بغیر حکومت فیصلہ نہ کرے،قبائل پر مسلط کیے گئے فیصلے قبول نہیں کریں گے،قبائلی ارکان پارلیمنٹ کا انتخاب کرسکتے ہیں تو اپنے سیاسی مستقبل کا بھی فیصلہ کرسکتے ہیں۔

وہ اتوار کو قبائلی امن کانفرنس سے خطاب کر رہے تھے۔انہوں نے کہا کہ ہرمحاذ پر قبائل کے شانہ بشانہ رہیں گے،ہم فرنگی قانون ایف سی آر کو نہیں مانتے ،قبائل کے سیاسی مستقبل کا فیصلہ قبائلی جرگگہ کرے گا،تمام سیاسی رہنماؤں نے قبائلی جرگے کی تائید کی،قبائل کو اختیار ملے تو وہ اپنے فیصلے خود کریں گے،جے یو آئی نے قبائل کے شملے کو دوبارہ سر پر رکھا ہے،قبائلی جرگے کی بات سنے بغیر حکومت فیصلہ نہ کرے،قبائل پر مسلط کیے گئے فیصلے قبول نہیں کریں گے۔

میں نے کہا کہ قبائل کے 14ارکان اسمبلی کی ترمیم ہی دکھا دیں،میں نے کہا فاٹا اصلاحات تک معاملہ رکھیں۔انہوں نے اسٹیٹس ہی بدل دیا۔مولانا فضل الرحمان نے کہاکہ قبائل انضمام کے حق میں ہیں تو ریفرنڈم سے کیوں فرار ہورہے ہیں،ہم آج بھی کسی غلامی کی زندگی قبول نہیں کریں گے،جمعہ کو میانمار اور شام کے مظلوموں سے اظہار یکجہتی کیا جائے گا،قبائلی ارکان پارلیمنٹ کا انتخاب کرسکتے ہیں تو اپنے سیاسی مستقبل کا بھی فیصلہ کرسکتے ہیں۔