بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / کوئٹہ ، ایف سی کی گا ڑ ی پر ریموٹ کنٹرول بم سے حملہ ، آٹھ اہلکار زخمی

کوئٹہ ، ایف سی کی گا ڑ ی پر ریموٹ کنٹرول بم سے حملہ ، آٹھ اہلکار زخمی

کوئٹہ۔ کوئٹہ میں مغربی بائی پاس کے قریب فرنیٹیئر کانسٹیبلری کی گاڑی پر ریموٹ کنٹرول بم دھماکے سے آٹھ اہلکار زخمی ہو گئے جبکہ وزیر اعلی بلوچستان ثناء اللہ زہری نے سیکیورٹی فورسز کو نشانہ بنانے کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ مجرمان کو کیفرکردار تک پہنچایا جائے گا پولیس حکام کے مطابق دہشتگردی کا یہ واقعہ صوبہ بلوچستا ن کے دارالحکومت کوئٹہ میں مغربی ( بروری ) بائی پاس کے قریب پیر کے روز پیش آیا ۔ پولیس کے مطابق سڑک کے کنارے نصب بم کو اس وقت ریموٹ کنٹرول سے اڑایا گیا جب ایف سی اہلکار ٹریننگ کے لئے معمول کے مطابق فائرنگ رینج جا رہے تھے ۔ رسیکیو ذرائع نے بتایا کہ دھماکے میں 6 سیکیورٹی اہلکار زخمی ہو گئے جن کو فوری طور پر بولان میڈیکل کمپلیکس منتقل کیا گیا ۔

زخمیوں میں پانچ کی حالت خطرے سے باہر جبکہ ایک اہلکار کی حالت تشویشناک بتائی جا رہی ہے ۔ زخمیوں میں نائب صوبیدار محمد شفیع ، حوالدار اول الرحمان ، نائیک لطیف ، اہلکار سیف ، رضا الرحمان اور قائم خان شامل ہیں پولیس نے بتایا کہ دھماکے کے فوری بعد سیکیورٹی فورسز اور بم ڈسپوزل اسکواڈ کے دستے جائے وقوعہ پر پہنچے اور تفتیش کی غرض سے علاقے کا محاصرہ کر لیا ۔ بم ڈسپوزل سکواڈ کے مطابق ریموٹ کنٹرول بم دھماکے میں آٹھ سے دس کلو گرام بارودی مواد استعمال کیا گیا جس سے معلوم ہوتا ہے کہ دہشتگردوں نے تخریب کاری کا سوچا سمجھا منصوبہ بنایا تھا ۔

دوسری طرف وزیر اعلی بلوچستان ثناء اللہ زہری نے کوئٹہ میں میں ایف سی کی گاڑی کو نشانہ بنانے کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ فورسز کو نشانہ بنانا قابل افسوس ہے لیکن دہشتگرد ناکام عزائم لے کر دہشت گردی کر سکتے ہیں بلکہ ہم پاکستانی قوم ایمان ، اتحاد اور تنظیم کی قوت سے ان انسانیت خوروں کو کیفر کردار تک پہنچا کر رہیں گے اور انشاء اللہ امن پاکستان کا مقدر بنے گا خیال رہے کہ نیشنل ایکشن پلان کے باوجود بلوچستا ن میں تواتر سے دہشتگرد حملے ہوتے رہے ہیں جبکہ سی پیک منصوبے سے بلوچستان کی اہمیت میں خاطر خواہ اضافہ بھی ہوا ہے اور ایسے حملوں کو حکومت اس منصوبے کو ناکام بنانے کی دشمنوں کی سازش قرار دیتی آ رہی ہے ۔