بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / سیاسی جماعتیں عدالت کو سیاسی اکھاڑہ بنانے سے گریز کریں، جسٹس کھوسہ

سیاسی جماعتیں عدالت کو سیاسی اکھاڑہ بنانے سے گریز کریں، جسٹس کھوسہ


اسلام آباد۔سپریم کورٹ نے احاطہ عدالت میں سیاسی جماعتوں کی پریس بریفنگ پر برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ عدالت کو سیاسی اکھاڑہ نہ بنایا جائے۔پاناما کیس میں سپریم کورٹ کے نئے بینچ تشکیل دئیے جانے کے بعد بدھ کوپہلی سماعت کے بعد کچھ دیر کے لئے وقفہ کیا گیا وقفے کے دوران پاکستان تحریک انصاف کی جانب سے فواد چوہدری نے سپریم کورٹ میں ہونے والی سماعت پر میڈیا کو بریفنگ دی جس کے جواب میں پاکستان مسلم لیگ نون کے رہنماؤں طلال چوہدری ، طارق فضل اور دیگر نے بھی احاطہ عدالت میں میڈیا کو بریفنگ دی۔

وقفے کے بعد جب کیس کی دوبارہ سماعت شروع کی گئی تو پاناما کیس کی سماعت کرنے والے جسٹس کھوسہ نے تمام سیاسی جماعتوں کو متنبہ کرتے ہوئے کہا کہ عدالت کو
سیاسی اکھاڑہ نہ بنائیں اس کے لئے پورا پاکستان پڑا ہے آپ لوگ جہاں چاہیں پریس کانفرنس کرسکتے ہیں دنیا میں کہیں ایسا نہیں ہوتا کہ احاطہ عدالت میں آپ میڈیا بریفنگ دے جسٹس کھوسہ کا مزید کہنا تھا کہ جوبھی بات کرے اس کے لئے مناسب انداز اختیار کریں ۔