Home / کالم / یحییٰ خالد

یحییٰ خالد

عید‘ کچھ پرانی یادیں

ہم وہ دیہاتی ہیں جنہوں نے خوشی سے یا مجبوری سے شہر کی زندگی اختیار کر لی ہے۔ ہمارا شہر میں آ جانا اس وجہ سے تھا کہ گاؤں میں تعلیمی سہولتوں کا فقدان تھا۔ ہم نے تو جیسے تیسے کچھ نہ کچھ تعلیم حاصل کر لی تھی مگر بہت …

Read More »

اونٹ کس کروٹ بیٹھے گا

بات بڑی سادگی سے شروع ہوئی کہ پانامہ لیکس میں وزر اعظم کا نام ہے تو اس کی تحقیق کی جائے معلوم ہوا کہ وزیر اعظم کا نام تو غلطی سے آ گیا تھا چلیں اگر نام نہیں تھا تو ان کے بیٹوں کی تو آف شور کمپنیاں ہیں اس …

Read More »

چیمپینز ٹرافی

ٹیم پاکستان کا ٹرافی میں آغاز اچھا نہیں ہوا ۔ اس کی وجہ ظاہر ہے کہ بڑے بوڑھوں کو اور آزمائے ہوؤں کو آزماناپاکستان ٹیم کو لے ڈوبا جسطرح کچھ عرصے سے بڑے بوڑھے کھیل رہے تھے اس سے معلوم تھا کہ ایسا ہی ہو گا۔رنز کی بات کریں تو …

Read More »

تاریک پہلو

کسی بھی واقعہ کے دو پہلو ہوتے ہیں۔ ایک روشن پہلو اور ایک تاریک پہلو۔یہ کسی صاحب کے ادراک کا امتحان ہوتا ہے کہ وہ کس پہلو کو دیکھنا پسند کرتا ہے۔ جو لوگ ہر واقعہ کے روشن پہلو کو دیکھتے یا دیکھنا چاہتے ہیں وہ اس دنیا کے کامیاب …

Read More »

سمجھنے کی باتیں

ہم نے تو عمر سادگی میں ہی گزار دی ۔ طالب علمی کی زندگی میں ایسے مضامین کا انتخاب کیا کہ جس کے سبب کسی سیاسی پارٹی سے وابستگی رکھ سکے اور نہ کسی ہلے گلے والی زندگی میں خود کو پھنسایاپائے ایک ہی روٹین رہی کہ کالج سے یا …

Read More »

دیوانوں کی ٹیم

کھیل میں کہا جاتا ہے کہ ٹیم میں اور چاہنے والوں میں بھی سپورٹس مین سپرٹ ہونی چاہئے یعنی کھیل کو کھیل سمجھ کر کھیلا جائے اور اسی نظر سے دیکھا بھی جائے یعنی ٹیم اگر کھیلنے کے لئے میدان میں اترتی ہے تو اُسکے جیتنے اور ہارنے کے برابر …

Read More »

سیاسی جنگیں

ایک زمانے سے دیکھا جا رہا ہے کہ صرف سیاسی ادارے ہی واحد ادارے ہیں جہاں ہر پارٹی کے اراکین دوسری پارٹی کو کاٹ کھانے کو دوڑتے ہیں اسکے علاوہ کسی بھی ادارے کو دیکھیں تو اگر ان کے کسی بھی رکن سے کوئی کوتاہی ہو جاتی ہے تو سارا …

Read More »

سیاست کے نئے رنگ

کہا جاتا ہے کہ جس کے بازو لمبے ہوں وہ کبھی مار نہیں کھاتا۔ دیہات میں لمبے بازؤوں کا مطلب بھائی ،برادری ہوتا ہے۔ جس بھی شخص کے بھائی اوربرادری یک جان ہو اُس پر حملہ کرنا بہت مشکل ہوتا ہے مگر جہاں برادری میں کھٹ مٹھ ہو جائے وہاں …

Read More »

وزیر اعظم اور قاضی صاحب

کچھ واقعات ایسے ہو جاتے ہیں کہ اچانک ماضی کی یادیں تازہ ہو جاتی ہیں۔کچھ ایسی ہی باتیں آج کل تقریباً روزانہ ہی رونما ہو رہی ہیں کہ اپنی نوکری کے اوائل کے دن بہت یاد آتے ہیں۔ہم نے اپنی نوکری کا آغازپشاور یونیورسٹی کے کالجیٹ سکول سے کیا۔جنگ ستمبر …

Read More »

ہم کیا کھا رہے ہیں؟

انسان کے ساتھ کچھ ضروریات اس طرح سے چپکی ہوئی ہیں کہ ان سے چھٹکارہ ممکن ہی نہیں۔خوراک ان میں اولین ضرورت کے طور پر لی جاتی ہے اس لئے کہ کھائے بغیر زندگی کا تصور بھی ممکن نہیں اسی طرح پانی بھی ایک ایسی ضرورت ہے کہ جس کے …

Read More »