216

شانگلہ میں غیرت کے نام پر خواتین سمیت 3 افراد قتل

صوبہ خیبرپختونخوا کی تحصیل شانگلہ میں مبینہ طور پر غیرت کے نام پر ایک شخص نے اپنی بیٹی اور اہلیہ سمیت 3 افراد کو قتل کردیا۔

تہرے قتل کا واقعہ تحصیل شانگلہ میں ماخوئی کے علاقے شیکو لائی میں پیش آیا۔

چاؤگاہ تھانے کے ایس ایچ او بخت حلیم نے بتایا کہ مقامی افراد کی جانب سے پولیس آگاہ کیا گیا تھا کہ قتل کا واقعہ شیکولائی میں پیش آیا ہے، جس پر پولیس جائے وقوع پر پہنچی۔

انہوں نے بتایا کہ جائے وقوع پر پولیس کو 2 خواتین، رخسانہ اور صادقہ کی لاش ملی، جو ملزم کی اہلیہ اور بیٹی ہیں جبکہ ان سے 100 فٹ کے فاصلے پر ملزم کے قریبی عزیز نور زایل کی لاش سڑک پر ملی۔

پولیس افسر نے بتایا کہ لاشوں کو پوسٹ مارٹم کے لیے ہسپتال منتقل کردیا گیا۔

انہوں نے کہا کہ پولیس نے عبدالصبور کے خلاف پاکستانی پینل کوڈ کی دفعہ 302 کے تحت قتل کا مقدمہ درج کرکے ملزم کی تلاش کے لیے کارروائی شروع کردی ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ ملزم واقعے کے بعد فرار ہوگیا تھا۔

ایس ایچ او نے بتایا کہ مقتولہ رخسانہ کی عمر 36 سال اور ان کی بیٹی صادقہ کی عمر 18 سال تھی جبکہ ہلاک ہونے والے شخص کی عمر 38 سال تھی۔

پولیس افسر نے بتایا کہ 'ملزم کو شبہ تھا کہ ان کی بیٹی اور اہلیہ کے ان کے قریبی عزیز کے ساتھ ناجائز تعلقات تھے'۔

انہوں نے مزید بتایا کہ تحقیقات جاری ہیں تاہم اب تک کوئی گرفتاری عمل میں نہیں آسکی ہے۔