252

جھوٹی کالزکرنیوالے افراد کیخلاف کاروائی شروع

پشاور۔خیبرپختونخو ایمرجنسی ریسکیو سروس (ریسکیو1122) نے غیر ضروری، تنگ کرنے اور جھوٹی فون کرنے والوں کیخلا ف کا روائی کا آغاز کرتے ہوئے متعلقہ موبائل فونز کمپنیوں سے معلومات حاصل کرنے کیلئے خط ارسال کردیا ڈائریکٹر جنرل ڈاکٹر خطیر احمد نے بتایا کہ ریسکیو1122 کسی بھی ایمرجنسی کے دوران بروقت خدمات فراہم کرتا ہے جس کیلئے صوبائی حکومت کی جانب سے خطیر رقم اور مکمل تعاون فراہم کیا جا رہا ہے۔

جبکہ بعض افراد کی جانب سے ریسکیو 1122کے ٹال فری نمبر 1122پر غیرضروری اور جھوٹی کالز کرنے والوں کی وجہ سے وسائل کا بے دریغ استعمال کیا جارہا ہے ڈاکٹر خطیر احمد نے کہا کہ خط میں غیرضروری اور جھوٹی کالز کرنے والے نمبرز کی مکمل معلومات  فراہم کی جائیں اور ان نمبرز کو بند کردیا جائے۔

 ریسکیو1122 ایکٹ کے سیکشن 26 اور 27 کے تحت ان کے افراد خلاف باقاعدہ کاروائی کا آغاز کیا جائے ریسکیو 1122اس وقت صوبے کے 10اضلا ع میں خدمات فراہم کر رہاہے جبکہ بہت جلد ا س کا دائرہ کار پورے صوبے تک پھیلا دیا جائے گا اس لئے ایسے غیر ضروری کالز کرنے والے افراد کے خلا ف حتمی کاروائی کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔