بریکنگ نیوز
Home / شوبز / بالی ووڈ کے لیجنڈ اداکار ونود کھنہ چل بسے

بالی ووڈ کے لیجنڈ اداکار ونود کھنہ چل بسے


ممبئی۔بالی ووڈ میں منفرد کردار نگاری کے حوالے سے شہرت پانے والے سپرسٹار ونود کھنہ بھی موت کے ہاتھوں زندگی کی جنگ ہار گئے ۔ ونود کھنہ نے 1968میں فلم من کا میت سے کیریئر کا آغاز کیا اور کئی فلموں میں یادگار کردار ادا کئے ۔ ان کی آخری ریلیز ہونے والی سپرہٹ فلم دبنگ ٹو تھی جس میں انہوں نے اداکار سلمان خان کے والد کا کردار ادا کیا تھا ۔

1971میں ونود کھنہ نے ہیرو کی بجائے متنوع کردار نگاری کیلئے منفی کردار ادا کرنے کی حامی بھری اور متعدد فلموں میں منفی نوعیت کے کردار ادا کئے ، انہیں اسی برس فلم ہم ، تم اور وہ میں ہیرو کا کردار ادا کرنے کا موقع ملا ، اسی برس ان کی ایک اور فلم میرے اپنے منظر عام پر آئی جس کی ہدایات گلزار نے دی تھیں ۔ ان پر فلمائے جانے والے گیت بھی ان کی بہترین کردار نگاری کی وجہ سے عوام میں پسند کئے جاتے تھے۔ 1973سے 1982کا دور ونود کھنہ کیلئے انتہائی کامیابی کا دور تھا ، اس دور میں ونود کھنہ کو مرکزی کرداروں پر مبنی فلموں میں کام کرنے کا موقع ملا جس میں فریبی ، ہتیارا ، قید ، ظالم ، انکار ، غدار جیسی فلمیں شامل تھیں مگر 1980میں انہیں فیروز خان کی فلم قربانی میں کام کرنے کا موقع ملا جس نے انہیں بالی ووڈ کا سپرسٹار بنا دیا ۔ونود کھنہ نے سولو فلموں کے ساتھ ساتھ ملٹی ہیرو فلموں میں بھی اداکاری کے جلوے دکھائے ۔

چور سپاہی ، ایک اور ایک گیارہ ، ہیرا پھیری ، خون پسینہ ، ضمیر اور امر اکبر انتھونی ان کے کیریئر کی کامیاب ترین فلموں میں شمار کی جاتی ہیں ۔ انہیں فلم مقدر کا سکندر میں امیتابھ بچن کے ساتھ کام کرنے کا بھی موقع ملا جس میں ان کی اداکاری کو بے حد سراہا گیا ۔ خوبرو اور دراز قد قامت کی وجہ سے وہ مرد و خواتین پرستاروں میں یکساں مقبول تھے ۔ 1982 میں اوشو رجنیش کی پیروکاری کی وجہ سے انہوں نے 5 برس تک فلم انڈسٹری کو الوداع کئے رکھا اور بعد میں 1987 میں ان کی واپسی فلم انصاف سے ہوئی جس میں ڈمپل کپاڈیہ ان کے ساتھ مرکزی کردار میں تھیں ۔

1999 میں ونود کھنہ کو ان کی طویل فنی خدمات کے اعتراف میں فلم فیئر لائف ٹائم اچیومنٹ ایوارڈ سے نوازا گیا تھا ۔ 2009میں سلمان خان کے ساتھ ان کی شہرہ آفاق فلموانٹڈریلیز ہوئی جس میں انہوں نے سلمان خان کے والد کا کردار کیا تھا ۔ 2010 میں آنے والی فلم دبنگ نے باکس آفس پر تہلکہ مچا دیا ۔ 2007میں انہیں ایک پاکستانی فلم گاڈ فادر میں بھی ایک اہم کردار میں سائن کیا گیا تھا جس میں ان کی اداکاری لاجواب رہی ۔

ونود کھنہ نے 1971میں گیتانجلی سے شادی کی جس سے ان کے دو بیٹے راہول کھنہ اور اکشے کھنہ پیدا ہوئے ، 1990میں ونود کھنہ نے کویتا نامی خاتون سے دوسری شادی کر لی جس سے ان کا ایک بیٹا سکشی اور ایک بیٹی شردھا ہے ۔ ونود کھنہ کو دو اپریل 2017کو خرابی صحت کی بنا پر ہسپتال داخل کرایا گیا تھا لیکن وہ جانبر نہ ہوسکے ان کی موت سے بالی ووڈ میں اداکاری کے ایک سنہری دور کا خاتمہ ہوگیا ہے۔