بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / نوجوانوں کو داعش کے نظریات سے بچانا اولین ترجیح ہے، ترجمان پاک فوج

نوجوانوں کو داعش کے نظریات سے بچانا اولین ترجیح ہے، ترجمان پاک فوج

اسلام آباد۔ پاک فوج کے ترجمان میجر جنرل آصف غفور نے کہاہے کہ داعش کے نظریات ہماری نوجوان نسل کو ہدف بنا رہے ہیں جبکہ داعش کی نوجوانوں میں سرایت روکنے کا چیلنج درپیش ہے۔جمعرات کواسلام آباد میں انتہاپسندی کو مسترد کرنے میں نوجوانوں کے کردار کے موضوع پر منعقدہ سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے ترجمان پاک فوج میجر جنرل آصف غفورنے کہا کہ انتہاپسندی کو مسترد کرنے میں نوجوان نسل کے کردار پر سیمینار ردالفساد آپریشن کا حصہ ہے۔

آپریشن ردالفساد کا مقصد پہلے سے کیے گئے تمام فوجی آپریشنز کی کامیابیوں کو مستحکم بنانا اور معاشرے سے انتہا پسندی کا خاتمہ ہے۔انہوں نے کہا کہ داعش نے ہمارے نوجوانوں کو نشانہ بنایا ، اس تنازع کی نوعیت اور کردار اب تبدیل ہوا ہے جس کے بعد آپریشن ردالفساد کے تحت کارروائی کی ضرورت مزید بڑھ گئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ یہ ریاست اور ہر فرد کی اجتماعی ذمہ داری ہے کہ اپنے دائرہ کار میں نوجوانوں کو اس خطے سے محفوظ رکھیں۔

اس عمل میں خطرے کی نشان دہی اور ردعمل کے لیے اقدامات شامل ہیں۔میجر جنرل آصف غفور کا کہنا تھا داعش کے نظریات ہماری نوجوان نسل کو ہدف بنا رہے ہیں، داعش کی نوجوانوں میں سرایت روکنے کا چیلنج درپیش ہے لہذا ایسی صورتحال میں نوجوانوں میں شعور اجاگر کرنے کی اہمیت مزید بڑھ جاتی ہے جب کہ نوجوانوں کو اس خطرے سے بچانا ہماری اجتماعی ذمہ داری ہے۔ انہوں نے کہا کہ دہشت گردوں کے خلاف جاری آپریشنز میں ملنے والی کامیابیاں نوجوانوں کی مرہون منت ہیں، دہشت گردی کے خلاف قربانیوں میں 90فیصد حصہ نوجوان سپاہیوں و افسروں کا ہے، جوانوں کی عظیم قربانیوں کو خراج تحسین پیش کرتے ہیں جب کہ نوجوان افسروں و سپاہیوں کی قربانیوں کو ضائع نہیں جانے دیں گے۔