بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / میونسپل ملازمین کی عید پھیکی پڑ گئی

میونسپل ملازمین کی عید پھیکی پڑ گئی

پشاور۔واٹر اینڈ سینی ٹیشن سروسز پشاور (ڈبلیو ایس ایس پی نے عیدالفطر پر ملازمین کی جانب سے عید ایام میں میونسپل سروسز کی عدم فراہمی اورڈیوٹی نہ کرنے کے اعلانات کا نوٹس لیتے ہوئے ادارے میں لازمی سروسز ایکٹ 1958ء نافذ کر دیا ہے جس کے تحت ڈبلیو ایس ایس پی کے ملازمین احتجاج ٗ ہڑتالیں اور جلسے و جلوس نہیں نکال سکیں گے ٗ ڈبلیو ایس ایس پی نے عیدالفطر کے ایام میں تمام ملازمین کو ڈیوٹی پر حاضر ہونے کا حکم دیتے ہوئے یونین کے عہدیداروں کو تنبیہ مراسلہ بھی ارسال کر دیا۔

ہیڈبلیو ایس ایس پی کے جنرل منیجر آپریشنز انجینئر علی الرحمن کی جانب سے گزشتہ روز آفس آرڈ جاری کیا گیا جس میں تمام ملازمین کو ہدایت کی گئی کہ وہ عیدالفطر 26جون سے 28جون کے دوران اپنی ڈیوٹیوں پر حاضر ہونگے اور پشاور میں گندگی اٹھانے سمیت واٹر سپلائی اور سینی ٹیشن کی تمام سروسز معمول کے مطابق فراہم کرینگے۔

انہوں نے ملازمین پر واضح کیا کہ ادارے میں لازمی سروسز ایکٹ 1958ء لاگو ہے یونین کے عہدیداروں کو جاری تنبیہ مراسلے میں کہا گیا ہے کہ ادارے میں لارمی سروسز ایکٹ کے نفاذ کے باوجود ملازمین مختلف ایشوز پر ہڑتالیں کرتے ہیں اور ڈبلیو ایس ایس پی کی گاڑیوں سمیت دیگر وسائل کا استعمال بھی کرتے ہیں تاہم اس کے باجود ان کے خلاف کاروائی نہیں کی گئی تاہم اس کے بعد لازمی سروسز ایکٹ کے تحت کاروائی عمل میں لائی جائے گی ۔

بورڈ آف ڈائریکٹرز نے 13 ویں اجلاس میں سرکاری چھٹیوں کے دوران ڈیوٹی کے عوض ایک دن جاریہ بنیادی تنخواہ کے برابر اوور ٹائم اور عیدالاضحی کے دنوں میں ایک چھٹی کے دوران ڈیوٹی پر دو دنوں کے اوور ٹائم کی ادائیگی کی منظوری دی ہے مراسلے میں ہدایت کی گئی ہے کہ صوبائی حکومت کے احکامات پر عمل کرتے ہوئے عید الفطر کے دنوں میں پانی اور سینی ٹیشن خدمات کی فراہمی یقینی بنائی جائے بصورت دیگر لازمی سروسز ایکٹ کی شق سات کے تحت کارروائی کی جائے گی جس میں قید وجرمانہ کے علاوہ ملازمت سے برطرفی بھی شامل ہے۔

انتظامیہ کا کہنا ہے کہ میونسپل ملازمین کو عید الفطر پر چھٹیاں کرنے کی اجازت نہیں دی ہے اس حوالے سے یونین کے عہدیدار غلط معلومات پھیلا رہے ہیں۔