بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / کامرہ میں تاریخ ساز منصوبے کا سنگ بنیاد

کامرہ میں تاریخ ساز منصوبے کا سنگ بنیاد


اسلام آباد ۔ پاکستان ائیروناٹیکل کمپلیکس کامرہ میں ایوی ایشن سٹی اور ائیر یونیورسٹی ائیرو سپیس اینڈ ایوی ایشن کیمپس کے سنگ بنیاد رکھنے کی تقریب ہوئی۔ وفاقی وزیر برائے منصوبہ بندی، ترقی و اصلاحات ، احسن اقبال اس موقع پر مہمان خصوصی تھے۔ پاک فضائیہ کے سربراہ ائیر چیف مارشل سہیل امان بھی اس موقع پر مو جود تھے۔ احسن اقبال اور ائیر چیف مارشل سہیل امان نے اس تاریخ ساز منصوبے کے سنگ بنیاد کی نقاب کشائی کی۔

پاک فضائیہ کے سابق سربراہان ، چیئرمین ایچ ای سی ڈاکٹر مختار احمد ، وائس چانسلر ائیر یونیورسٹی ائیر وائس مارشل (ریٹائرڈ) فائز امیر اور اعلیٰ سول اور دفاعی عہدیداران بھی اس تقریب میں شریک تھے۔ایوی ایشن سٹی میں مختلف جدید اور بہترین تعلیمی اور تحقیقی ادارے ہونگے جو ایوی ایشن کی صنعت میں خود کفالت کی منزل کو حاصل کرنے میں معاون ثابت ہونگے۔ اس منصوبے کا مرکز ائیر یونیورسٹی ائیرو سپیس اینڈ ایوی ایشن کیمپس ہو گا جسے بین الاقوامی ایوی ایشن یونیورسٹیز کے معیار کے مطابق بنایا گیا ہے جو جدید سہولیات سے لیس ہو گا۔

اس ایوی ایشن سٹی کا ایک اہم جزو ایوی ایشن ریسرچ اینڈ انڈیجینائزیشن اینڈ ڈیویلپمنٹ انسٹیٹیوٹ ہوگا جوجدید ٹیکنالوجی کے مختلف شعبہ جات میں تحقیق کا کام کرے گا۔ اس عظیم منصوبے کا ایک اہم حصہ ایوی ایشن ڈیزائن انسٹیٹیوٹ بھی ہوگا جو پاک فضائیہ کی استعداد کو استعمال کرتے ہوئے اس کے مختلف جہازوں کی صلاحیتوں میں اضافہ کرنے کے لئے استعمال ہوگا۔ اس ادارے میں ففتھ جنریشن لڑاکا طیارے کی تیاری کے مختلف مراحل اور اس کی کارکردگی کا تجزیاتی جائزہ لینے کا کام بھی سر انجام دیا جائیگا۔

یہاں قائم کی جانے والی سرٹیفیکشن ایجنسی ان مصنوعات کے بہتر معیار کو یقینی بنائے گی اور اس جدید لڑاکا طیارے کی تیاری اس اشتراک کی مظہر ہو گی۔ اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے پاک فضائیہ کے سربراہ نے کہا کہ یہ تاریخی واقعہ پاک فضائیہ اور پاکستانی ایوی ایشن کی تاریخ میں ایک بے مثال سنگِ میل ثابت ہو گا۔انہوں نے کہا کہ اس کیمپس کا قیام دراصل پاک فضائیہ کے وژن کا حصہ ہے جس میں ایک ہی جگہ پرصنعتی اور تعلیمی ہم آہنگی ممکن ہوگی۔

انہوں نے کہا کہ یہ خودانحصاری کی جانب جانے کا راستہ ہے اور ایک خواب کی تعبیر ہے جس میں ایوی ایشن کی صنعت ترقی کرے گی اور ملکی معیشت کو سہارا دے گی۔ انہوں نے ایوی ایشن سٹی کے لئے اہداف کا تعین کرتے ہوئے یہ کہا کہ فیفتھ جنریشن لڑاکا طیارے کی ڈیزائننگ ، زیادہ دیر تک پرواز کرنے والے بغیر پائلٹ طیاروں اور جدید ہتھیاروں کی تیاری انجینئرز کے لئے ایک سنہری موقع ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ ہم اس راہ پر چل پڑے ہیں جو ہمیں سول اور لڑاکا طیاروں، جدید ہتھیاروں اور ایوی یانکس کی ملک میں تیاری کو یقینی بنانے میں مدد گار ثابت ہو گا جو کہ وقت کی اہم ضرورت ہے۔ وفاقی وزیر برائے منصوبہ بندی، ترقی و اصلاحات نے کہا کہ پاک فضائیہ نے ملک میں دہشتگردی کے خاتمے کے لئے اہم کردار ادا کیا ہے اور لازوال قربانیاں دی ہیں ۔

انہوں نے مزید کہا کہ مضبوط پاکستان کو یقینی بنانے کے لئے پاک فضائیہ کو مضبوط بنانا اشد ضروری ہے ۔ انہوں نے اس جدید ایوی ایشن سٹی کے قیام کے لئے ائیر چیف کی پر خلوص کاوشوں کی تعریف کی اور امید ظاہر کی کہ جدید سہولیا ت سے لیس یہ عظیم منصوبہ بہترین تعلیمی مواقع فراہم کرے گا۔ انہوں نے حکومت کی طرف سے اس خواب کو حقیقت کا روپ دینے کیلئے ہر ممکن مدد فراہم کرنے کا عہد کیاتاکہ اس بہترین منصوبے کو پایہ تکمیل تک پہنچایا جا سکے۔