بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / جے آئی ٹی میں شہباز شریف سے پوچھے گئے 5سوالات

جے آئی ٹی میں شہباز شریف سے پوچھے گئے 5سوالات


اسلام آباد۔جے آئی ٹی کی رپورٹ کے مطابق چھ رکنی ٹیم کے سامنے شہباز شریف سے پوچھ گچھ کے دوران پانچ سوالات پوچھے گئے جن میں پہلا سوال یہ تھا کہ شریف خاندان کی وراثت کی تقسیم کے معاہدے 2005 میں قطری سرمایہ کاری کا ذکر کیوں نہیں؟ تو شہباز شریف نے جواب دیا کہ انہیں اس بارے میں علم نہیں، دوسرا سوال یہ تھا کہ 2009 میں جب خاندانی جائیداد کی تقسیم کے معاہدے پر عمل ہوا تو اس میں حسین نواز کو قطری سرمایہ کاری سے اثاثے ملنے کا ذکر کیوں نہیں۔

جس پر شہباز شریف نے کہاکہ وہ غالبا حسین نواز کے حصے میں آئے اور اس کی تحویل میں تھے، تیسرا سوال یہ پوچھا گیا کہ وراثتی جائیداد کی تقسیم کے وقت خواتین مردوں کے حق میں دستبردار ہوئیں، اسی قسم کا فائدہ حسین نواز کو لندن فلیٹ کی ملکیت دیتے وقت کیوں نہیں دیا گیا؟ توانہوں نے کہاکہ عقلمندی اسی میں ہے کہ میں یہاں سے چلا جاو ں جب ان سے یہ سوال کیا گیا کہ کیا لندن فلیٹس کو اثاثوں کی تقسیم کے وقت سب بھول گئے تھے یا ایسا جان بوجھ کر کیا گیا؟

تو انہوں نے جواب دیا کہ میرے خیال میں یہ حسین نواز کے قبضے تھے اس لیے یہ معاملہ کسی نے نہ اٹھایا، جب وزیراعلی پنجاب سے سوال کیا گیا کہ کیا حسن نواز جو فلیٹس میں رہائش پذیر تھے اس کی ملکیت کے زیادہ حقدار نہ تھے؟ تو ان کا کہنا تھا کہ حسین نواز بڑا بھائی ہے اس طرح کے سوالات خاندان میں نہیں اٹھائے جاتے۔