بریکنگ نیوز
Home / انٹرنیشنل / امریکہ اور چین نے نوازشریف نااہلی داخلی معاملہ قرار دیدیا

امریکہ اور چین نے نوازشریف نااہلی داخلی معاملہ قرار دیدیا


بیجنگ۔چین نے عوامی عہدے سے نوازشریف کی نااہلی کو پاکستان کا داخلی معاملہ قراردیا ہے اور کہ اس سے بیلٹ وروڈ منصوبے کے تناظر میں بھی ان کی سماجی ، اقتصادی تعاون پر مبنی شراکت داری متاثر نہیں ہوگی ۔چین کی وزارت خارجہ کے ترجمان لوکھانگ سے جب وزیراعظم کے عہدے سے نوازشریف کی برطرفی سے متعلق سپریم کورٹ کے فیصلے کے بارے میں تبصرہ کرنے کو کہا گیا تو ترجمان نے کہا کہ انہوں نے متعلقہ رپورٹ دیکھی ہے جب ان کی توجہ باقاعدہ پریس بریفنگ میں پانامہ کیس کے بارے میں عدالتی فیصلے کی جانب مبذول کرائی گئی تو ترجمان نے یہ ریمارکس دیے ۔ ترجما ن نے کہا کہ یہ پاکستان داخلی معاملہ ہے ، دوست ہمسایہ ملک کے طور پر چین کو امید ہے کہ پاکستان کے تمام طبقے اور جماعتیں ملکی اور قومی مفادات کو ترجیح دیں گے ، اپنے داخلی امور سے مناسب طور پر نمٹیں گے ، اتحاد اور استحکام برقرار رکھیں گے اور اقتصادی وسماجی ترقی پر توجہ مبذول رکھیں گے ۔ ترجمان نے کہا کہ پاکستان اور چین کے درمیان سدا بہار دوستی آزمائش کی ہر گھڑی پر پوری اتری ہے ، ہمیں یقین ہے کہ پاک چین دفاعی تعاون ، شراکت داری پاکستان کے اندر صورتحال کی تبدیلی سے متاثر نہیں ہوگی ۔امریکہ نے بھی پاناما کیس کے فیصلے کو پاکستان کا اندرونی معاملہ قرار دیدیا۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق امریکی محکمہ خارجہ کے عہدیدار نے پاناما کیس میں وزیراعظم نوازشریف کی نااہلیت پر ردعمل ظاہر کرتے ہوئے کہا کہ پاناماکیس کافیصلہ پاکستان کااندرونی معاملہ ہے۔امیدہے پارلیمنٹ نئے وزیراعظم کاانتخاب کر کے پرامن منتقلی کاعمل مکمل کریگی۔اس سے قبل چین نے پاناما کیس پر ردعمل ظاہر کرتے ہوئے کہا تھاکہ نوازشریف کی نااہلی پاکستان کا داخلی معاملہ ہے اس سے بیلٹ وروڈ منصوبے کے تناظر میں بھی ان کی سماجی ، اقتصادی تعاون پر مبنی شراکت داری متاثر نہیں ہوگی ۔چینی وزارت خارجہ کے ترجمان لوکھانگ کا کہنا تھاکہ دوست ہمسایہ ملک کے طور پر چین کو امید ہے کہ پاکستان کے تمام طبقے اور جماعتیں ملکی اور قومی مفادات کو ترجیح دیں گے ، اپنے داخلی امور سے مناسب طور پر نمٹیں گے ، اتحاد اور استحکام برقرار رکھیں گے اور اقتصادی وسماجی ترقی پر توجہ مبذول رکھیں گے ۔

ترجمان نے کہا کہ پاکستان اور چین کے درمیان سدا بہار دوستی آزمائش کی ہر گھڑی پر پوری اتری ہے ، ہمیں یقین ہے کہ پاک چین دفاعی تعاون ، شراکت داری پاکستان کے اندر صورتحال کی تبدیلی سے متاثر نہیں ہوگی ۔واضح رہے کہ سپریم کورٹ نے پاناما کیس سے متعلق دائر درخواستوں پر نواز شریف کو نااہل قرار دے دیا جب کہ الیکشن کمیشن نے فیصلے کے مطابق نواز شریف کی اسمبلی کی رکنیت ختم کرنے کا نوٹی فکیشن جاری کردیا ۔پانچ ججزکا متفقہ فیصلہ 25 صفحات پر مشتمل ہے جس کا کچھ حصہ جسٹس اعجاز افضل خان اور کچھ بینچ کے سربراہ جسٹس آصف سعید خان کھوسہ نے کھلی عدالت میں پڑھ کر سنایا۔