بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / اسلام آباد کے سستا بازار میں آتشزدگی

اسلام آباد کے سستا بازار میں آتشزدگی


اسلام آباد۔ وفاقی دارالحکومت کے مرکزی علاقے سیکٹر ایچ نائن میں واقع سستے بازار میں لگی آگ سے 478 سے زائد اسٹالز جل کر خاکستر ہوگئے ، براہ راست آگ کی لپیٹ میں آنے والے سی سیکشن اور ایچ سیکشن میں کل 500 کے قریب سٹالز ہیں جن میں سے 95 فیصد کے قریب مکمل طور پر خاکستر ہوئے جبکہ 5 فیصد اسٹالز کا جزوی طور پر نقصان ہوا۔

کچرے کے ڈھیر کوٹھکانے لگانے کے لیے آگ لگائی گئی تھی جس نے تیز ہوا کے باعث وہاں لگے پرانے کپڑوں کے اسٹالز کو اپنی لپیٹ میں لے لیا۔ آگ کی شدت اتنی زیادہ تھی کہ دیکھتے ہی دیکھتے آگ نے 500 سے زائد اسٹالز کو اپنی لپیٹ میں لے لیا، واقعے کی اطلاع ملنے پر امدادی ٹیمیں اور ریسکیو عملہ موقع پر پہنچ گیا لیکن تمام تر کوششوں کے باوجود آگ پر قابو نہ پایا جاسکا اورآگ بازار کے بیشتر حصے میں پھیل گئی۔ جس پر شہر بھر سے فائر بریگیڈ کی 12 گاڑیوں کے علاوہ سرکاری اور نجی کمپنیوں کے واٹر ٹینکر بھی منگوالیے گئے۔

اس موقع پر وہاں موجود ایس ایس پی آپریشنز ساجد کیانی نے میڈیا کو بتایا کہ شکر ہے واقعے میں کوئی جانی نقصان نہیں ہوا، آگ کیسے لگی اس کی انکوائری بعد میں ہوگی تاہم ابتدائی طور پر پتہ چلا ہے کہ آگ ایک اسٹال میں یو پی ایس کی بیٹری پھٹنے کے باعث لگی۔ دوسری جانب سستا بازار کے تاجروں کا کا کہنا ہے کہ فائر بریگیڈ کا عملہ اطلاع ملنے کے باوجود تاخیر سے پہنچا جس کی وجہ سے آگ نے شدت اختیار کی۔

اسلام آباد کے میئر شیخ انصر سستا بازار پہنچے تو شہریوں اور تاجروں نے ان سے امدادی ٹیموں اور فائربریگیڈ کے جائے وقوعہ پر تاخیر سے پہنچنے کی شکایت کی جس پر میئراسلام آباد نے انہیں تاخیر کے ذمہ داروں کے خلاف کارروائی کی یقین دہانی کروائی۔ تحریک انصاف کے اسلام آباد سے رکن قومی اسمبلی اسد عمر نے بھی جاے حادثہ کا دورہ کیا۔ انتظامیہ کے مطابق سرکاری بچت بازار میں لگنے والی آگ کی وجوہات جاننے کے لئے تین رکنی تحقیقاتی کمیٹی تشکیل دے دی گئی ہے ، ایس پی آئی نائن لیاقت نیازی معاملے کی تحقیقات کریں گے۔