بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / NA-120ٗ مر یم نواز نے انتخابی مہم کا آغاز کر دیا

NA-120ٗ مر یم نواز نے انتخابی مہم کا آغاز کر دیا

لاہور۔سابق وزیر اعظم میاں نوازشر یف کی صاحبزادی مر یم نواز نے اپنی علیل والد ہ کی جگہ لاہورکے ضمنی انتخابات کی مہم کا باقاعدہ آغاز کرتے ہوئے کہا کہ دھرنہ ’پانامہ اور اقامہ صرف بہانہ نوازشر یف نشانہ ہیں‘نوازشر یف 4سال چپ رہے ہیں اگر وہ اب بول رہے تو تکلیف کیوں ہو رہی ہے‘17ستمبر کو مہروں کی سیاست ختم ہو جائیگی

‘نوازشر یف کو اللہ تعالیٰ بحال کر یں گے مگر کارکنان عہد کر یں اب انکے ساتھ ہونیوالے ظلم اورزیادتی کابدلہ لیں گے اور ووٹ کی حر مت کا تحفظ کیا جائیگا ‘لاہور کی ترقی پر تنقید کر نیوالے کس منہ سے این اے120میں اب ووٹ مانگ رہے ہیں ‘17ستمبر کو پورا پاکستان دیکھے گا کہ شیر آئیگا اور بیگم کلثوم نوازشر یف ہی کامیاب ہونگی ‘ نواز شریف کا رویہ تلخ نہیں اور اب وہ سچی بات کررہے ہیں تو سننے کا حوصلہ رکھیں‘ میری والدہ بیمار ہیں اور لندن میں زیر علاج ہیں‘ اللہ تعالی انہیں صحت عطا کرے،

نواز شریف ان کی عیادت کے لئے بدھ کے روز لندن جارہے ہیں‘ زندگی میں اتار چڑھا آتے ہیں لیکن ہمیں اللہ تعالی پر کامل یقین ہے۔ وہ منگل کے روز اپنے شوہر کیپٹن (ر) محمد صفدر ‘صوبائی وزیر بلال یاسین ‘رکن پنجاب اسمبلی ماجد ظہور سمیت کارکنوں کے ہمراہ درائے ونڈ سے داتادربار پر حاضری کے بعد ریلی کی صورت میں مزنگ صفاں والے چوک میں (ن) لیگ کے مر کزی انتخابی دفتر کا افتتاح کر نے کیلئے پہنچی جہاں (ن) لیگ کے کارکنوں کی کثیرتعداد نے انکا شاندار استقبال کیا اور ان پر پھولوں کی پتیاں نچھاور کرتے ہوئے کارکنان مر یم نواز اور میاں نوازشر یف کے حق میں نعرے بازی بھی کرتے رہے اپنے خطاب اور میڈیا سے گفتگو میں مر یم نوازشر یف نے کہا کہ زندگی میں اتار چڑھا آتے ہیں لیکن ہمیں اللہ تعالی پر کامل یقین ہے، اللہ تعالی کا شکر ہے کہ اس نے جس حال میں رکھا اچھا رکھا۔ انہوں نے کہا کہ والد کا رویہ تلخ نہیں ہے،

وہ ملک کے لیے بات کرتے ہیں، نواز شریف ایک عرصہ خاموش رہے لیکن اب وہ صرف سچ کہہ رہے ہیں اور اگر وہ حقیقت بیان کررہے ہیں تو سننے کا حوصلہ رکھیں۔مریم نواز نے کہا کہ میری والدہ بیمار ہیں اور لندن میں زیر علاج ہیں، اللہ تعالی انہیں صحت عطا کرے، نواز شریف ان کی عیادت کے لئے بدھ کے روز لندن جارہے ہیں، والدہ کی انتخابی مہم کی ذمہ داری پوری کروں گی۔انہوں نے کہا کہ نوازشر یف اور انکے خاندان نے ہر قسم کے حالات کا مقابلہ کیا، نوازشریف کا رویہ تلخ نہیں، حقائق اور سچ بیان کرنا پڑتے ہیں اللہ نے جس حال میں رکھا بہت اچھارکھا یہ وقت بھی گزر جائے گا۔ انہوں نے اپنی تقریر میں ناصرف نواز شریف کی نااہلی کے فیصلے کو تنقید کا نشانہ بنایا بلکہ سیاسی مخالفین کو بھی آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے کہا کہ یہ لوگ لاہور کی اور لاہور والوں کی ترقی کے خلاف ہیں، ان سے پوچھیں کہ انہوں نے لاہور کیلئے کیا کچھ کیا ہے اور کس منہ سے ادھر ووٹ مانگنے آ رہے ہیں؟

مریم نواز شریف نے اپنی تقریر کا آغاز کرتے ہوئے حاضرین سے سوال کیا کہ نواز شریف کے خلاف فیصلہ منظور ہے؟ جس پر حاضرین نے نفی میں جواب دیا۔ مریم نواز نے کہا کہ کیا پاکستان کو ایٹمی طاقت بنانے والا، پاکستان کو سڑکوں کا جال دینے والا، پاکستان کو سی پیک جیسا تاریخی منصوبہ دینے والا شخص نااہل ہو سکتا ہے؟ این اے 120 وہ حلقہ ہے جس نے ایک نہیں، دو نہیں بلکہ تین بار نواز شریف کو وزیراعظم منتخب کیا ہے۔ کیا چوتھی بار تیار ہو؟ آپ کے ووٹ کی جو بے حرمتی، بے توقیری اور بے عزتی کی گئی، کیا اس بے عزتی کا جواب 17 ستمبر کو دو گے؟

انہوں نے کہا کہ یہ جو لوگ آپ سے ووٹ مانگنے آ رہے ہیں، ان سے پوچھو کہ لاہور کیلئے انہوں نے کیا کیا؟ ان سے پوچھو کہ جہاں ان کو لوگوں نے ووٹ دیا، وہاں انہوں نے کیا کیا۔ یہ جب لاہور سے باہر تقریریں کرتے ہیں تو لاہور کی ترقی کو اور آپ کی ترقی کو نشانہ بناتے ہیں، لاہور کی ترقی کے خلاف بات کرتے ہیں، یہ کس منہ سے ادھر ووٹ مانگنے آ رہے ہیں ۔ نواز شریف پچھلے ساڑھے چار سال سے چپ کر کے بیٹھا ہوا تھا اور اب اگر وہ بول رہا ہے تو کیوں تکلیف ہو رہی ہے، نواز شریف کے خلاف ڈیڑھ سال سے مقدمے چل رہے ہیں، مقدمہ پانامہ پر شروع ہوا اور اقامہ پر ختم ہوا، تو جو مقدمہ کرپشن کے الزامات سے شروع ہوا اور اقامہ پر ختم ہوا، اس نے ثابت کیا کہ آپ کا لیڈر نواز شریف صادق بھی ہے اور امین ہے، دھاندلی، دھرنا، پانامہ، اقامہ صرف بہانہ ہے، نواز شریف نشانہ ہے۔ مریم نواز کا کہنا تھا کہ چلو آج فیصلہ کرتے ہیں کہ جس شخص کے ساتھ چار سال سے زیادتی ہو رہی ہے، سازشیں ہو رہی ہیں، مجھے بتا، اس کا نام بتا، وہ کون ہے

جو سر پھینک کر آپ کی خدمت میں لگا رہا، وہ کون ہے جس نے پاکستان کو سی پیک دیا، وہ کون ہے، جس نے پاکستان کو اور لاہور کو میٹرو بس دی، وہ کون ہے جس نے لاہور کو اورنج ٹرین دی، وہ کون ہے جس نے پاکستان سے لوڈشیڈنگ کے اندھیرے ختم کئے، ہاتھ اٹھا کر بتا، وہ کون ہے جس نے ملک سے دہشت گردی کا خاتمہ کیا، وہ کون ہے جس کیساتھ زیادتی ہوئی۔انہوں نے کہا کہ کیا آپ لوگ نواز شریف کا ساتھ دو گے، کلثوام نواز شریف کو جتوا گے، اپنی ماں کو جتوا گے،

سازش کرنے والوں کو جواب دو گے، ہاتھ اٹھا کر وعدہ کرو کہ 17 ستمبر کو مہروں کی سیاست کو ختم کرو گے، 17 ستمبر کو یہ شیر بولیں گے، 17 ستمبر کو جو جواب دو گے،وہ پوری دنیا کو جائے گا ۔انہوں نے کہا کہ آپ لوگ 17 ستمبر کو اپنے ووٹ کی بے حرمتی کا بدلہ لو گے اور ووٹ کی عزت کرا گے، وزیراعظم کو بحال اللہ کرے گا لیکن اس کیساتھ جو زیادتی ہوئی ہے اس کا ازالہ آپ کرو گے ، میری اور آپ کی ماں یہاں سے الیکشن لڑ رہی ہے، دعا کرو کہ اللہ اس کو صحت عطافرمائے، ان کو زندگی دے اور اسے فتح نصیب فرمائے۔