بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / نیشنل بینک کا سابق صدر عدالت سے گرفتار

نیشنل بینک کا سابق صدر عدالت سے گرفتار

کراچی ۔ نیشنل بینک میں18ارب روپے کے معاملے پر ساب صدر نیشنل بینک علی رضا کو ضمانت خارج ہونے کے بعد نیب حکام نے سندھ ہائیکورٹ کے باہر سے گرفتار کرلیا گیا، کیس میں دیگر 6ملازمین کو بھی عدالت سے باہر سے گرفتار کیا گیا، ملزموں پر الزام ہے کہ انہوں نے نیشنل بینک بنگلہ دیش برانچ میں 18ارب 50کوڑ روپے کی کرپشن کی تھی۔

2009کی آڈٹ رپورٹ میں یہ کرپشن سامنے آئی تھی، کیس میں مطلوب سات بنگالی ملزمان کو گرفتار کرنے کیلئے سارک حکام سے رابطہ کیا گیا ہے۔جمعہ کو نیشنل بینک میں 18ارب روپے کی کرپشن کے معاملے پر سابق صدر نیشنل بینک علی رضا کی ضمانت خارج ہونے کے بعد ان کو گرفتار کرلیا گیا، دیگر 6ملزم بھی ضمانت خارج ہونے کے بعد گرفتار کرلئے گئے۔

نیب حکام نے ملزموں کو سندھ ہائیکورٹ کے باہر سے گرفتار کیا، سندھ ہائی کورٹ میں معاملہ زیر سماعت ہے، جس کے خارج ہونے پر تمام ملزمان کو گرفتار کیا گیا، اس سے قبل ان تمام ملزمان نے ضمانت قبل از گرفتاری لے رکھی تھی، ملزموں پر الزام ہے کہ انہوں نے بنگلہ دیش برانچ میں 18ارب 50کروڑ ورپے سے زائد کی کرپشن کی تھی، سات بنگالی ملزم تاحال اشتہاری ہیں جن کی گرفتاری کیلئے سارک ممالک سے رابطہ کیا گیا ہے، 2009کی آڈٹ رپورٹ میں یہ کرپشن سامنے آئی تھی۔