بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / رشوت طلب کرنے پر پولیس اہلکار معطل

رشوت طلب کرنے پر پولیس اہلکار معطل

پشاور۔400روپے دو ورنہ تھانے چلو،صوبائی دارالحکومت پشاور میں پولیس کانسٹیبل کی شہری سے 400 روپے رشوت طلب کرنے بصورت دیگر تھانے لے جانے کی دھمکی دینے کی ایک ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہوگئی جس کانوٹس لیتے ہوئے انسپکٹر جنرل آف پولیس کے احکامات روشنی میں رشوت طلب کرنے والے کانسٹیبل کو معطل کرکے کوارٹر گاڈ میں بند کردیا گیا ہے گزشتہ روز سوشل میڈیا پر ایک ویڈیو وائرل ہوئی جس میں دیکھا اور سنا جاسکتا ہے کہ رنگ روڈ پر ایک پولیس اہلکار نے موٹرسائیکل سوار کو کاغذات نہ رکھنے کی پاداش میں روکا ہوا ہے اور اس سے کافی بحث کے بعد 400 روپے رشوت کا مطالبہ کرتا ہے تاہم شہری کی جانب سے پیسے دینے سے انکار پر پولیس اہلکار اسے تھانے لے جانے کی دھمکی دیتا ہے۔

ویڈیو میں یہ بھی دیکھا جاسکتا ہے کہ جب شہری کہتا ہے کہ میرے پاس پیسے نہیں ہے تو پولیس کانسٹیبل اس سے 200 روپے کا تقاضہ کرتا ہے تاہم 200 روپے دینے سے بھی انکار کرنے کے بعد پولیس اہلکار موٹرسائیکل پر سوار اس کے دوسرے ساتھی سے پیسے لینے کا کہتا ہے مذکورہ ویڈیو وائرل ہونے کے بعد انسپکٹر جنرل پولیس صلاح الدین محسود نے نوٹس لیتے ہوئے سی سی پی او پشاور کو ملوث اہلکار کا پتہ لگانے اور اسے معطل کرنے کے احکامات جاری کردیئے جس کی روشنی میں سی سی پی او کی ہدایت پر ایس ایس پی آپریشنز پشاور سجاد خان نے ملوث کانسٹیبل کی شناخت کرنے کے بعد اسے معطل کرکے کوارٹر گارڈ میں بند کردیا۔

پولیس ترجمان کے مطابق ویڈیو میں رشوت طلب کرنے والے کانسٹیبل کی شناخت کانسٹیبل عمران کے نام سے ہوئی جو تھانہ پھندو میں تعینات تھا جبکہ ایس ایس پی آپریشن نے واقعہ کی انکوائری کیلئے کمیٹی تشکیل دے کر اس سے 24 گھنٹے کے اندر رپورٹ طلب کرلی ہے۔ایس ایس پی آپریشن کا کہنا ہے محکمے کا نام بدنام کرنے والے اہلکاروں کے ساتھ سختی سے نمٹا جائے گا اور کسی کے ساتھ کوئی رعایت نہیں برتی جائے گی دریں اثناء پولیس ذرائع سے معلوم ہوا کہ رشوت طلب کرنے میں ملوث اہلکار عمران ،دہشت گردی کے خلاف جنگ کے دوران شہید ہونے والے ایک ڈی ایس پی کا صاحبزاہ ہے۔