بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / یونیفارم نہ پہننے والے میونسپل ملازمین پر جرمانہ عائد

یونیفارم نہ پہننے والے میونسپل ملازمین پر جرمانہ عائد

پشاور۔واٹر اینڈ سینی ٹیشن سروسز پشاور (ڈبلیو ایس ایس پی) نے ملازمین کے آل میونسپل ورکرز کے کہنے پر یونیفارم نہ پہننے اور سرکاری گاڑیوں کو ذاتی مقاصد کے لئے استعمال کرنے کا نوٹس لیتے ہوئے واضح کیا ہے کہ ملازمین کا یہ اقدام ایفیشنسی اینڈ ڈسپلنری (ای اینڈ ڈی) رولز کے تحت مس کنڈکٹ کے زمرے میں آتا ہے جس پر کارروائی کی جائے گی۔

اس سلسلے میں جنرل منیجر آپریشنز انجینئر علی خان نے باضابطہ نوٹیفکیشن جاری کر دیا ہے جس کے مطابق یونیفارم نہ پہننے والے کمپنی ملازمین کو روزانہ کی بنیاد پر ایک سو روپے جرمانہ کیا جائے گا اگر ملازمین پھر بھی قواعد ضوابط کی خلاف ورزی سے باز نہ آئے تو ادارہ ای اینڈ ڈی رولز کے مطابق سخت کارروائی پر مجبور ہوگا۔ زونل منیجرز کو ہدایت کی گئی ہے کہ ڈرائیوروں کی تنخواہ سے سالیڈ ویسٹ اٹھانے کی بجائے سرکاری گاڑیوں کو دوسرے مقاصد کے لئے استعمال کرنے پر پانچ پانچ سو روپے کٹوتی کی جائے۔

ادھر انجینئر علی خان نے ایک بیان میں کہا کہ یونین کے مطالبات منظور کرلئے گئے ہیں جو مطالبات انتظامیہ کے اختیار سے باہر تھے انہیں بورڈ کے ایجنڈے میں شامل کیا گیا ہے یونین بلیک میلنگ پر اتر آئی ہے جس کا کمپنی اور پشاور کے عوام کو نقصان ہو رہا ہے حکومت اور ضلعی انتظامیہ کو صورتحال سے آگاہ کر دیا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت نے ڈبلیو ایس ایس پی میں پچھلے سال لازمی سروس ایکٹ نافذ کر دیا ہے ایسے میں ہڑتال اور کام نہ کرنا حکومتی احکامات کی خلاف ورزی ہے۔