بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / غیر جمہوری حکومت پاکستان کے مسائل حل نہیں کر سکتی ٗوزیراعظم

غیر جمہوری حکومت پاکستان کے مسائل حل نہیں کر سکتی ٗوزیراعظم

اٹک ۔ وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے کہ ملک میں ترقی اسی وقت ہوگی جب جمہوریت ہوگی، ٹیکنوکریٹ یا غیر جمہوری حکومت پاکستان کے مسائل حل نہیں کرسکتی،پاکستان میں ہر شعبے کو اور ہر صارف کو گیس چوبیس گھنٹے مل رہی ہے،پاکستان کو ایسا ملک بنائیں گے جو ترقی کرے، مہنگائی اور عوام کے مسائل کم ہوں،حکومت نے چار سال میں تمام شعبوں میں ریکارڈ قائم کیے ہیں، نہیں ، 2018 کے الیکشن میں سب کو عوامی فیصلہ قبول کرنا ہوگا، چیلنجز سے نمٹ رہے ہیں، ملکی ترقی وخوشحالی ہماری منز ہے، ، جس علاقے میں گیس دریافت ہوئی ہے پہلا حق اسی کا ہے۔

جمعہ کو اٹک میں تیل اور گیس کے منصوبے جھنڈیال ون کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم نے کہا کہیہ گیس کی پنجاب میں ایک بڑی دریافت ہے، یہ پیش خیمہ ہے، کہ مزید دریافت ہوتی رہیں گی ، 5ارب روپیہ انویسٹ کیاگیا، پاکستان کا گہرا ترین کنواں ہے یہ جتنا راولپنڈی اسلام آباد گرمیوں میں یومیہ استعمال کرتا ہے اتنی گیس اس ایک کنویں سے نکلے گی، ڈھائی ہزار بیرل تیل اور 50ٹن ایل پی جی یومیہ ملے گی، اس سے مقامی افراد کو فائدہ ملیں گے۔شہبا شریف کو بھی مبارکباد دیتاہوں ، پاکستان میں ہر گیس کے صارف کو آج گیس چوبیس گھنٹے مل رہی ہے، جب سے حکومت آئی ہے اس حکومت نے چار سال میں 103 دریافتیں کی ہیں، منصوبے کی دریافت بہتر مستقبل کی نوید ہے، محمد نواز شریف کی پالیسیز کو ہم آگے بڑھارہے ہیں۔

یہ وہ کامیابیاں ہیں جو 2013کے الیکشن کی وجہ سے عوام کو ملی ہیں چار سا ل میں کوئی معمولی کام نہیں ہوئے۔ انہوں نے کہا نوازشریف نے ایسی پالیسیاں شروع کیں جسے ہم آگے بڑھا رہے ہیں۔وزیراعظم نے کہا کہ یہ وہ کامیابیاں ہیں جو الیکشن کی وجہ سے ملک حاصل کررہا ہے، عوام نے فیصلہ کیا اور اس کے ثمرات ان تک پہنچ رہے ہیں اور پہنچتے رہیں گے۔انہوں نے کہا کہ جو کام پانچس سال میں ہوئے وہ معمولی نہیںِ 1999 سے لے کر 2013 تک کسی بھی شعبے کے کام ایک طرف رکھیں اور ہمارے چار سال کے کام دیکھیں وہ 15 سال کے عرصے پر بھاری ملیں گے۔ انہوں نے کہا کہ ملک میں ترقی صرف اس وقت ممکن ہوگی جب جمہوریت پروان چڑھے گی کیونکہ جمہوریت مضبوط ہوگی تب ہی ملک ترقی کرے گا، اس کے علاوہ کوئی دوسرا راستہ نہیں، ٹیکنوکریٹ یا غیر جمہوری حکومت پاکستان کے مسائل حل نہیں کرسکتی۔

انہوں نے مزید کہا کہ آج جمہوریت کو مضبوط کرنا ہے اور آئندہ الیکشن میں حصہ لے کر فیصلہ کرنا ہے، جو کچھ اس حکومت نے کیا وہ عوام کے سامنے ہے، جب سے پاکستان بنا 20 ہزار میگا واٹ بجلی بنی لیکن ان چار سالوں میں دس ہزار میگاواٹ سے زائد بجلی سسٹم میں داخل ہوئی۔وزیراعظم کہا یہ کوئی معمولی کامیابیاں نہیں، اس عرصے میں مشکلات بھی آئیں جنہیں عبور کیا اور ترقی کے راستے پر بڑھے، ابھی بھی چیلنجز ہیں جن کا مقابلہ کررہے ہیں، ہم پاکستان کو ایسا ملک بنائیں گے جو ترقی کرے، مہنگائی کم ہو اور عوام کے مسائل بھی کم ہوں، یہی ہمارا مینڈیٹ ہے جس پر فیصلہ اب عوام کو کرنا ہے۔