بریکنگ نیوز
Home / دلچسپ و عجیب / امریکی ایئرلائن کی خواتین عملے پر مشتمل پرواز

امریکی ایئرلائن کی خواتین عملے پر مشتمل پرواز


ٹیکساس: دنیا بھر کی تمام ایئر لائنز میں اس بات کا خیال رکھا جاتا ہے کہ پرواز کے دوران عملے میں خواتین کی بھی مناسب تعداد شامل ہو تاکہ خواتین مسافروں کو اپنی مشکلات بیان کرنے میں کسی قسم کی دقت نہ ہو لیکن امریکی ایئرلائن نے پرواز ہی خواتین کے حوالے کردی۔

View image on Twitter

امریکا میں بھر پورمسابقت کے باعث فضائی کمپنیاں نت نئے تجربات اور جدت لاتی ہیں، ایسا ہی ایک تجربہ ’’ساؤتھ ویسٹ ایئرلائنز‘‘ نے کیا ’’ساؤتھ ویسٹ ایئرلائنز‘‘ کا شمار دنیا کی سستی ترین سفری سہولیات فراہم کرنے والی ایئرلائن میں ہوتا ہے لیکن صنفی بنیادوں پر برابری کا شعور اجاگر کرنے کے لیے کمپنی نے ایک پرواز کو خواتین عملے ہی کے حوالے کردیا۔

View image on Twitter

ایئر لائن نے سان فرانسسکو سے سینٹ لوئیس جانے والی بوئنگ 737 میکس 8 جیسے جدید ترین طیارے کی پرواز کو ’’ان مینڈ‘‘ یعنی ’’مرد عملے کے بغیر‘‘  کا نام دیا۔ اس پرواز میں پائلٹ سمیت پورا عملہ ہی خواتین پر مشتمل تھا۔ اس حوالے سے ایئر لائن نے سوشل میڈیا پر تصاویر بھی جاری کیں۔

ایوی ایشن کے شعبے سے منسلک ماہرین نے ’’ان مینڈ‘‘ پرواز کو سراہتے ہوئے کہا ہے کہ دنیا بھر کے کمرشل پائلٹس میں خواتین کی تعداد صرف 6 سے 7 فیصد ہے، اس صورت حال میں ’’ساؤتھ ویسٹ ایئرلائنز‘‘ کی ’’ان مینڈ‘‘ کو خواتین عملے پر مشتمل اولین کہا جاسکتا ہے۔

ایئر لائن حکام کا کہنا ہے کہ کمپنی نے اس سے پہلے بھی پروازوں کے لیے خواتین پر مشتمل کریو تشکیل دے چکی ہے۔ اس کے علاوہ ایئر لائن نے 5 خواتین کو فضائی شعبے کی تعلیم حاصل کرنے کے لیے اسکالر شپ بھی دی ہے۔