بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / امیر جماعت اسلامی کاملک کو فری ایجوکیشن سٹیٹ بنانیکا وعدہ

امیر جماعت اسلامی کاملک کو فری ایجوکیشن سٹیٹ بنانیکا وعدہ


پشاور۔ امیر جماعت اسلامی سینٹر سراج الحق نے مطالبہ کیا ہے کہ دفاع کے بعد سب سے زیادہ بجٹ تعلیم کیلئے مختص کی جائے ،دنیا چاند پر پہنچ چکی ہے اور ہمارے بچے گندگی کے ڈھیروں میں رزق تلاش کررہے ہیں ،موقع ملا تو ملک کو ایجوکیشن فری سٹیٹ بناکر پرامن اور خوشحال اسلامی معاشرہ قائم کرکے پوری دنیا کیلئے ایک مثال بنائینگے ،تعلیم کے فروغ سے قومیں ترقی کرتیں ہیں لیکن ہمارے حکمرانوں نے تعلیم کاحصول بھی ملک میں ناممکن بنا دیا ،وزیربناتھا تو سب سے پہلے دسویں تک تعلیم مفت کردیا تھا۔

اب موقع ملا تو ملک ایجوکیشن فری سٹیٹ بنائینگے‘ ان خیالات کا اظہار انہوں نے پردہ باغ پشاور میں اسلامی جمعیت طلباء کے زیر اہتمام خیبرسٹوڈنٹس کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے کیا اس موقع پر امیر جماعت اسلامی خیبرپختونخوا مشتاق احمد خان ،ناظم اعلیٰ اسلامی جمعیت طلباء میاں سید سہیب الدین کاکا خیل ،ناظم صوبہ شاہکار عزیز،سابق وزیر خوراک وایکسائز اینڈ ٹیکسیشن فضل ربانی ایڈوکیٹ نے بھی خطاب کیا ۔

امیر جماعت اسلامی سینیٹر سراج الحق نے کہا کہ آج خیبرپختونخوا کے طلباء یہاں جمع ہیں اور 5فیصد بجٹ و یونیورسٹیاں مانگتے ہیں ہم اگر حکومت میں آئے تو پہلے صرف دسویں تک تعلیم فری کیا تھا اور اب تعلیم عام کرینگے اور مفت تعلیم کا حصول ممکن بنائینگے انہوں نے کہا کہ ہر بچے کے تعلیم کے اخراجات حکومت برداشت کریگی،انہوں نے کہا کہ نااہل حکمرانوں کی وجہ سے تعلیم سمیت دیگرسہولیات سے بھی شہری محروم ہیں اور تعلیمی اداروں میں اپنی کرپشن چھپانے کی ڈر سے طلباء یونین پر پابندی عائد کررکھی ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہم طلباء کو انکے بنیادی سہولیات دینگے اور تعلیم کے حصول میں کسی بھی رکاوٹ پر کمپرومائز نہیں کرینگے ہم ایک نظام تعلیم متعارف کرائینگے اور انشاء اللہ یہ پوری دنیا کیلئے ایک مثال ہوگاانہوں نے کہا کہ جماعت اسلامی نے ایم ایم دور میں میٹرک تک مفت تعلیم رائج کیا انھوں نے کہدوسروں کی بجائے ہمیں خود آئندہ نسلوں کے لئے منصوبی بندی کی ضرورت ہے ،ہمارے نوجوان تعلیم حاصل کرکے بیرونی ممالک جاتے ہیں اور وہاں اپنی ساری زندگیاں کھپادیتے ہیں لیکن انشاء اللہ آپ لوگوں نے ساتھ دیااور اللہ نے چاہا تو آنے والے وقت میں پھر ہمارے نوجوان باہر جاکر تعلیم حاصل نہیں کرینگے باہر سے لوگ یہاں آکر وہ تعلیم حاصل کرینگے ہم اس ملک کو ایجوکیشن فری ملک بنائینگے۔