بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / خیبر پختونخوا کی جیلوں میں فنی تربیت سنٹرزقائم کر نیکا فیصلہ

خیبر پختونخوا کی جیلوں میں فنی تربیت سنٹرزقائم کر نیکا فیصلہ


پشاور۔چیف سیکرٹر ی خیبر پختونخو امحمد اعظم خان کی زیر صدارت محکمہ جیل خانہ جات خیبرپختونخوا کے حوالے سے ایک اعلیٰ سطحی اجلاس پشاور میں منعقدہ ہوا جس میں مذکورہ محکمہ کی کارکردگی اورمعاملات کومزید بہتر بنانے کے حوالے سے بعض اہم فیصلے ہوئے جن کامقصدجیلوں میں قیدقیدیوں اورحوالاتیوں کوزندگی کی بنیادی سہولیات بہم پہنچانا ہے۔

اس موقع پر چیف سیکرٹری نے سیکرٹر ی داخلہ کو ہدایت کی کہ ہری پور اوربنوں کی جیلوں میں قیدیوں کو فنی تربیت دینے کے لئے قائم ہونے والے ووکیشنل ٹریننگ سنٹروں کی فوری تکمیل کے لئے ٹیکنیکل ایجوکشن اینڈ ووکیشنل ٹریننگ اتھارٹی سے فوری رابطہ کریں اورصوبے کی دوسری بڑی جیلوں میں بھی ایسے ہی سنٹروں کے قیام کے لئے پی سی ون تیار کریں۔

انہوں نے محکمہ جیل خانہ جات کے اہلکاروں کی تربیت کے لئے ہری پورجیل میں انسٹیٹیوٹ کے قیام کے لئے 30 نومبر تک پی سی ون تیار کرنے کے بھی ہدایت کی جبکہ سیکرٹری محکمہ خزانہ کوہدایت کی گئی کہ مختلف جیلوں میں سیکورٹی سے متعلق آلات کی مرمت کے لئے درکار فنڈز فوری طورپرجاری کریں۔ بعض جیلوں میں قیدیوں کے لئے انڈورگیمز کی سہولیات کوسراہتے ہوئے چیف سیکرٹری نے ہدایت کی کہ ایسی تمام جیلوں جن میں موزو ں جگہ موجود ہو بھی انڈورگیمز کی سہولیات شروع کریں۔

انہوں نے جیلوں میں مریضوں کی ہیپاٹائٹس (بی ،سی)اورایچ آئی وی سیکریننگ ٹیسٹوں کی موجودہ سہولت کوسراہتے ہوئے ہدایت کی کہ محکمہ صحت ا س پروگرام کوصوبے کی تمام جیلوں تک پھیلانے اورمزید بہتر بنانے کیلئے اقدامات کریں۔ مختلف جیلوں میں سوشل ورک کے لئے مربوط نظام کورائج کرنے کے حوالے سے چیف سیکرٹر ی نے ہدایت کی کہ اس سلسلے میں ایک جامع تجویز فوری طورپر تیار کرکے حکومت کو بھیجوائیں تاکہ اس سلسلے میں قانونی تقاضے پورے کرنے کے لئے اقدامات کیے جاسکیں۔

اجلاس میں محکمہ جیل خانہ جات کی ریسٹرکچرنگ کے حوالے سے چیف سیکرٹری نے ہدایت کی کہ جامع کیس 30 نومبر تک محکمہ داخلہ کی وساطت سے بھیجوایاجائے جبکہ پروموشن کے تمام کیسز کو جلداز جلدنمٹانے اورتمام خالی اسامیوں باالخصوص ڈاکٹروں اوردوسرے طبی عملے کی بروقت اورقانونی تقاضے کے مطابق تعیناتی یقینی بنائیں۔