بریکنگ نیوز
Home / پاکستان / صوبائی اسمبلی میں بااختیار قبائلی نمائندگی کے خواہاں ہیں ٗشاہ فرمان

صوبائی اسمبلی میں بااختیار قبائلی نمائندگی کے خواہاں ہیں ٗشاہ فرمان


پشاور۔پی ٹی آئی کے رہنما اور صوبائی وزیر اطلاعات شاہ فرمان نے کہاہے کہ فاٹا کے صوبہ میں انضمام کے بعداس پسماندہ علاقہ کو تیز تر ترقی دینے کے لیے خیبر پختونخوا سے دس فیصد زیادہ بجٹ دیں گے ہم صوبائی اسمبلی میں مکمل بااختیار قبائلی نمائندگی کے خواہاں ہیں وہ گذشتہ روز جے یو آئی س کے زیر اہتمام پردہ باغ میں قبائلی جرگہ سے خطاب کررہے تھے انہوں نے کہاکہ فاٹا میں ایف سی آر کی وجہ سے ظلم کانظام قائم ہے۔

یہی وجہ ہے کہ تمام جماعتیں اس بات پر متفق ہیں کہ فاٹا سے ایف سی آر کاخاتمہ کرکے اسے خیبر پختونخوامیں ضم کیاجائے کس قدربدقسمتی کاامرہے کہ منتخب قبائلی اراکین پارلیمنٹ فاٹا کے لیے نہ تو قانون سازی کرسکتے ہیں نہ اس کے لیے مختص بجٹ پر بحث کرسکتے ہیں لیکن جب فاٹا صوبہ میں ضم ہوجائے گا تو صوبائی اسمبلی میں موجودا سکے نمائندے بے اختیارنہیں ہونگے بلکہ وہ اپنے لیے قانون سازی کے ساتھ ساتھ بجٹ پربحث بھی کرسکیں گے انہوں نے کہاکہ فاٹا سے ظلم کانظام ختم کرکے بنیادی انسانی حقوق دیئے جائیں گے اور اس کے لیے پی ٹی آئی تمام جماعتوں کے ساتھ مل کرجدوجہدکے لیے تیار ہے ۔