بریکنگ نیوز
Home / صحت / ٹماٹر کا استعمال کینسرسمیت 6 خطرناک بیماریوں سے بچاتا ہے، ماہرین

ٹماٹر کا استعمال کینسرسمیت 6 خطرناک بیماریوں سے بچاتا ہے، ماہرین

نیویارک۔ سبزیوں اور پھلوں کو اپنی خوراک کا حصہ بنانے سے جہاں انسانی صحت پر اچھے اثرات مرتب ہوتے ہیں وہیں ان کے ایسے فوائد بھی ہیں جن سے ہم آج تک لاعلم ہیں لیکن انہیں ہم روزانہ یا کم از کم ہفتے میں ایک بار ضرور استعمال کرتے ہیں۔

انسانی صحت، جلد اور بالوں کو خوبصورت بنانے کے علاوہ توانائی میں اضافے اور وزن کی کمی کے لئے لوگ عام طور پر مختلف سبزیاں یا پھل استعمال کرتے ہیں لیکن یہاں آپ کو ٹماٹر کے وہ حیران کن فوائد سے متعلق آگاہ کیا جائے گا جن سے نہ صرف دل کے امراض میں کافی حد تک کمی واقع ہوتی ہے بلکہ ذیابیطس اور کینسر کے مرض میں بھی حیران کن حد تک کمی واقع ہوتی ہے۔ ماہرین کا کہنا ہے کہ ٹماٹر غذائی اجزا سے بھرپور ہوتا ہے جس میں وٹامن اے، سی اور فولک ایسڈ کی مقدار ہوتی ہے جو انسان کو کینسر، بلڈ پریشر اور دیگر 6 بیماریوں سے تحفظ فراہم کرتا ہے۔

کینسر:

ٹماٹر میں موجود وٹامن سی اور دیگر خصوصیات جسم میں بننے والے کینسر کے جرثوموں کے خلاف مزاحمت کرنے میں مدد دیتا ہے , ٹماٹر کو اپنی روز مرہ کی خوراک کا حصہ بنانے سے کینسر کے خطرات بہت حد تک کم ہوجاتے ہیں۔

بلڈ پریشر:

ٹماٹر میں موجود سوڈیم کی کم مقدار بلند فشارخون کو کنٹرول میں رکھتا ہے جب کہ اس میں پوٹاشیم کی مقدار خون کی بہتر انداز میں گردش کو درست رکھتا ہے۔

ذیابیطس:

مطالعے میں یہ بات بھی سامنے آئی ہے کہ ایسے افراد جو زیابیطس کی ٹائپ ون میں مبتلا ہوتے ہیں وہ فائبر کا استعمال بہت کرتے ہیں جس سے ان میں بلڈ گلوکوز لیول کم ہوجاتا ہے جب کہ ذیابیطس کی ٹائپ ٹو میں مبتلا افراد اپنی خوراک میں  ٹماٹر کا استعمال کرکے خون میں شامل شوگر کو بہتر کرسکتے ہیں۔

دل کے امراض:

ٹماٹر میں موجود فائبر، پوٹاشیم، وٹامن سی اور فیٹی ایسڈ دل کے امراض کو کنٹرول میں رکھتا ہے جب کہ ہائپرٹینشن انسٹیٹیوٹ تینیسی کے ڈائریکٹر پروفیسر مارک ہوسٹن کا کہنا ہے کہ روزانہ 3 ٹماٹروں کے استعمال سے انسانی جسم میں فولک ایسڈ کی بھاری مقدار جمع ہوجاتی ہے جس سے دل کے امراض میں مبتلا ہونے کے خطرات میں کافی حد تک کمی واقع ہوجاتی ہے ۔ اسی طرح ایک اور مطالعہ میں کہا گیا ہے کہ وہ افراد جو روزانہ 4 ہزار 69 ملی گرام پوٹاشیم کی مقدار استعمال کرتے ہیں ان میں دل کے امراض کے باعث ہلاک ہونے والے خطرات 49 فیصد تک کم ہوجاتے ہیں۔

مثانوں کا کینسر:

یونیورسٹی آف ایلیونیوز کے پروفیسر جان ارڈمین کے مطابق ٹماٹر اور اس سے بنی اشیا کے استعمال سے پروسٹیٹ کینسر میں کمی واقع ہوتی ہے یہی نہیں ہارورڈ اسکول آف پبلک ہیلتھ کی جانب سے کئے گئے مطالعے کے مطابق ٹماٹر کے استعمال سے خاص طور پر نوجوانوں میں پروسٹیٹ کینسر کے امراض میں مبتلا ہونے کے خدشات کم ہوجاتے ہیں۔

آنتوں کا کینسر:

امریکن کینسر سوسائٹی کے مطالعے میں کہا گیا ہے کہ ایسے افراد جو ٹماٹر کو اپنی غذا کا خصوصی جز بناتے ہیں وہ کینسر کی مختلف اقسام میں متبلا ہونے سے محفوظ رہتے ہیں جن میں خاص طور پر آنتوں، مثانے، پھیپھڑے اورپیٹ کے کینسر نمایاں ہیں۔